جی ٹوئنٹی اجلاس میں شاہ سلمان کا خطاب انسان کی اولیت باور کراتا ہے : الجبیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور عادل الجبیر کا کہنا ہے کہ جی ٹوئنٹی سربراہ اجلاس کی صدارت کے دوران شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے خطاب نے باور کرا دیا ہے کہ اولین اہمیت انسان کو حاصل ہے۔

جمعرات کے روز اپنی ٹویٹ میں الجبیر نے کہا کہ جی ٹوئنٹی سربراہ اجلاس میں سامنے آنے والے نکات ،،، شاہ سلمان کی اس دعوت سے مطابقت رکھتے ہیں جس میں ان کہنا تھا کہ کرونا کا مقابلہ کرنے کے واسطے شانہ بشانہ کھڑا ہوا جائے۔

واضح رہے کہ جی ٹوئنٹی گروپ کے ورچوئل سربراہ اجلاس کا آغاز سعودی فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے افتتاحی خطاب سے ہوا۔ اس موقع پر انہوں نے زور دیا کہ کرونا کی وبا سب سے یہ مطالبہ کرتی ہے کہ وہ مختلف جہتوں میں بھرپور اور ٹھوس اقدامات کریں۔ کرونا کے سبب جنم لینے والا انسانی بحران عالمی سطح پر توجہ کا تقاضا کرتا ہے۔ شاہ سلمان نے تمام ملکوں سے باہمی یک جہتی کا مطالبہ کیا۔

سربراہ اجلاس سے قبل جی ٹوئنٹی گروپ کے ممالک کے وزراء خزانہ اور مرکزی بینکوں کے گورنروں کا ورچوئل اجلاس بھی منعقد ہوا۔ اجلاس کے شرکاء کا اس بات پر اتفاق ہوا کہ کرونا وائرس کے پھیلاؤ سے نمٹنے کے لیے ایک "ورکنگ پلان" وضع کیا جائے۔

عالمی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے توقع ظاہر کی ہے کہ اس وبا کے نتیجے میں عالمی کساد بازاری سامنے آئے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں