.

سیٹھ کا گھڑی اور دھوپ کا چشمہ چرانے کا الزام لگا کر کارکنوں پر تشدد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان اور شام میں اپنے ملازمین پر تشدد کی الگ الگ خوفناک ویڈیوز سامنے آئی ہیں۔ لبنان کی بستی ماجدالعاقورہ میں ایک سیٹھ اپنے ہاں مزدوری کے طور پر باغ سے چیری کے پکے ہوئے پھل اتارنے پر مامور کارکنوں کو تشدد کا نشانہ بنا رہا ہے کہ ان پر الزام لگایا گیا ہے کہ انہوں نے مبینہ طور سیٹھ کی گھڑی اور دھوپ والا چشمہ چرا لیا تھا۔

چیری کے باغات میں مزدوری کرنے اور سیٹھ کا تشدد سہنے والا یہ مزدور اس الزام کو ماننے سے انکار کرتا ہے۔ مگر سیٹھ اسے ویڈیو میں تھپڑ مارتے ہوئے دیکھا جا رہا ہے۔ تشدد کے دوران بنائی گئی اس ویڈیو میں کئی زیر تشدد آنے والے مزدوروں کے کپڑے بھی ان کے جسم پر نہیں رہنے دیے گئے ہیں۔

'' النہار '' کے مطابق مقامی سیٹھ اور بعض دوسرے لوگوں نے کارکنوں پر تشدد کرتے ہوئے ان کے منہ میں آلو ٹھونس دیے۔

داخلی سلامتی سے متعلق نظامت نے ایک بیان جاری کیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ 20 جون کو ایک شخص نے درخواست دائر کی جس میں دعوی کیا گیا کہ متعدد لوگوں نے تقریبا سات سو امریکی ڈالر چوری کر لیے ہیں۔ جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ تشدد کرنے والے فرد کو بھی شامل تفتیش کر لیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں