موسم کی غیر یقینی صورت حال سے سعودی عرب کے وسیع علاقے متاثر ہوں گے: ماہر موسمیات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے ماہر موسمیات معاذ الاحمدی نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کو انکشاف کیا ہے کہ جمعرات 29 دسمبر سے مملکت میں شروع ہونے والی بارشیں اور موسم کی غیریقینی صورت حال مملکت کے وسیع علاقے کو متاثر کرے گی۔

انہوں نے کہا کہ ’سائنوپٹک‘ نقشے فضائی دباؤ کی آمد کی نشاندہی کرتے ہیں جو بحیرہ احمر کے ساحل کے وسط میں موسم کی شدت کی طرف اشارہ ہے۔اس کے علاوہ سعودی عرب جزیرہ نما عرب کے جنوب مشرق میں فضائی بلندی میں سرد ہوائیں چلنے کی پیش گوئی گئی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ سب سے پہلے جنوبی علاقے کے ساحل اور اس کی بلندیوں سے جازان کےعلاقےابھا، النماص، الباحہ اور مکہ المکرمہ کے علاقے اور اس کے انحصارکے علاوہ طائف کی گورنری اور اس کے علاقے متاثر ہوئے ہیں۔ بحیرہ احمر کے ساحل، خاص طور پر جدہ رابغ اللیث، القنفذہ، مشرقی ساحل پہاڑی علاقے، نجد، مغربی اور جنوبی علاقوں کے مشرق میں دارالحکومت ریاض اور اس کےاطراف اورالقصیم کے علاقوں میں بارشوں کے ساتھ تیز ہوائیں چلنے کا امکان ہے۔

مشرق میں دمام تک جمعہ کی صبح سے ہفتہ کی شام تک ہے گرج چمک کے ساتھ طوفانی بارشوں کی پیش گوئی کی گئی ہے۔ اتوار، پیر اور منگل کو ہوا کا دباؤ مزید گہرا ہو گا۔ مدینہ اور اس کے مضافات، ینبع الرایس اور دیگر گورنریوں ، مشرق کی طرف حائل، الجوف، طربجل، شمالی سرحدوں اور حفر الباطن میں 7 جنوری 2023 بروز ہفتہ تک موسم کی غیر یقینی صورت حال برقرار رہے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں