نو مئی، ایک لیفٹیننٹ جنرل سمیت تین افسران برخاست: پاکستان فوج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل احمد شریف نے 9 مئی کے واقعات کی تحقیقات کے بارے میں ایک پریس کانفرنس میں بتایا ہے کہ ’فوج نے خود احتسابی کے عمل کو مکمل کر لیا ہے۔ جو متلعقہ ذمہ دار ہیں ان کے خلاف تادیبی کارروائی عمل میں لائی گئی۔

لیفٹیننٹ جنرل تین افسران کو نوکری سے برخاست کر دیا گیا ہے۔‘اس کے علاوہ انہوں نے کہا کہ ’تین میجر جنرلز اور سات بریگیڈیئرز سمیت 15 افسران کے خلاف سخت تادیبی کارروائی مکمل کی جا چکی ہے۔‘

ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل احمد شریف نے کہا ہے کہ ’نو مئی کے حوالے سے اب تک کی تحقیقات میں بہت سے شواہد مل چکے اور مل رہے ہیں۔‘ ان کا کہنا تھا کہ ’جو کام دشمن نے 76 میں نہ کر سکا وہ نو مئی کو مٹھی بھر شرپسندوں نے کر دیا۔‘

میجر جنرل احمد شریف نے کہا ’اس وقت ایک ریٹائڑڈ فور سٹار جنرل کی نواسی، ایک ریٹائڑڈ فور سٹار جنرل کا داماد، ایک ریٹائڑڈ تھری سٹار جنرل کی بیگم اور ایک ایک ریٹائڑڈ ٹو سٹار جنرل کی بیگم اور داماد ناقابل تردید شواہد کی بنیاد پر اس تادیبی کارروائی سے گزر رہے ہیں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ ’آپ کو ان سزاؤں سے اندازہ ہو گا کہ فوج کے اندر خود احتسابی کا عمل بغیر کسی تفریق کے کیا جاتا ہے۔ جتنا بڑا عہدہ ہوتا ہے اتنہ ہی بڑی ذمہ داری نبھانی پڑتی ہے۔‘

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں