.

’ڈونلڈ ٹرمپ کا ’کیم یون او‘ سے گرم جوش معانقہ‘

دونوں رہ نماؤں کے ہم شکلوں نے ناظرین کو حیران کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

انٹرنیٹ پرتیزی کے ساتھ مقبول ہونے والی ایک فوٹیج کو پہلی نظر سے دیکھنے والے ناظرین نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور شمالی کوریا کے کیم جون اون کو ایک دوسرے سے معانقہ کرتے دیکھ کر حیران رہ سکتے ہیں، مگر اس میں حیرت کی کوئی بات نہیں کیونکہ ہانگ کانگ میں یہ ڈرامہ دونوں رہ نماؤں کے ہم شکل افراد نے کر کے لوگوں کی توجہ اپنی جانب مبذول کرانے کا حربہ استعمال کیا ہے۔

ذرائع ابلاغ کے مطابق ہانگ کانگ کی ایک مصروف شاہراہ پر حال ہی میں قمری سال نو کے موقع پر مقامی شہریوں نے لوگوں کی توجہ کے حصول کے لیے ٹرمپ اور کیم جون اون کے ہم شکل دو افراد کی ملاقات کرائی۔ ویڈیو میں ٹرمپ کی ڈمی اور کیم جون اون کی ڈمی کو ایک دوسرے کے اتنا قریب ہوتے دیکھا جاسکتا ہے گویا وہ ایک دوسرے کو بوسہ دینے لگے ہیں۔

شمالی کوریا کے سربراہ کیم جون اون جنہیں امریکا کا بدترین دشمن تصور کیا جاتا ہے کی ڈمی کا کردار ایک آسٹریلیائی موسیقار ھاوارڈ کے نام سے جانے جاتے ہیں۔ ھاوارڈ کی شکل وصورت غیرمعمولی حد تک کیم جون اون سے ملتی ہے اور کیم جون اون کی صورت سے واقف لوگ پہلی نظر میں یہی گمان کرتے ہیں کہ یہ وہی ہیں۔

ٹرمپ کے ہم شکل بن کر فرضی کیم جون اون سے گرم جوش معانقہ کرنے والے 66 سالہ امریکی موسیقار ڈیننس ایلن ہیں۔ وہ ان دنوں ہانگ کانگ میں تھے۔ ٹرمپ کی ڈمی کا کردار ادا کرنے والے ڈینس پر نو منتخب امریکی صدر کے مقرب حلقوں کی طرف سے سخت تنیقد کی جا رہی ہے۔

فرضی کیم جون اون نے مزاحیہ پیرائے میں ڈونلڈ ٹرمپ کو امریکا کا نیا صدر منتخب ہونے پر مبارک باد پیش کی اور کہا کہ دونوں ملک ایک دوسرے کے دشمن نہیں بلکہ دوست بن کر رہیں گے۔ ہانگ کانگ کی سڑکوں پر چلتے ہوئے انہوں نے مداحوں کواپنے ساتھ سیلفی بنانے سے منع کردیا تھا۔