سعودی عرب: جدہ میں لوسیڈ گروپ کے پہلے کار ساز پلانٹ کا باضابطہ افتتاح

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
6 منٹس read

برقی کارساز لوسیڈ گروپ نے بدھ کو سعودی عرب کے ساحلی شہر جدہ میں واقع شاہ عبداللہ اکنامک سٹی میں کاریں تیار کرنے کے پہلے پلانٹ کا باضابطہ افتتاح کردیا ہے۔

لوسیڈ گروپ ،لوسیڈ ائیر کے ساتھ اس وقت لگژری الیکٹرک گاڑیوں کے استعمال اور تجربے کے نئے معیارات قائم کررہا ہے اور اس نے 2023ء میں عالمی لگژری کار ایوارڈ جیتا ہے۔

لوسیڈ گروپ کے ایک پریس ریلیز کے مطابق لوسیڈ کے دوسرے ایڈوانسڈ مینوفیکچرنگ پلانٹ (اے ایم پی-2) اور پہلے بین الاقوامی پلانٹ کی حیثیت سے یہ سعودی عرب کے لیے شاندار الیکٹرک گاڑیاں تیار کرے گا اور دیگر مارکیٹوں میں بھی برآمد کرے گا۔

سعودی عرب کے پبلک انویسٹمنٹ فنڈ کے گورنر یاسرالرمیان کی موجودگی میں لوسیڈ کے اے ایم پی -2 پلانٹ کا باضابطہ افتتاح ایک ہائی پروفائل تقریب میں کیا گیا۔ لوسیڈ گروپ کے بورڈ کے چیئرمین ترکی النویسر،لوسیڈ گروپ کے چیف ایگزیکٹو آفیسر (سی ای او) اور سی ٹی او، پیٹر رولنسن۔ اور گروپ کے نائب صدر اور منیجنگ ڈائریکٹر برائے مشرقِ اوسط فیصل سلطان سمیت بہت سے مہمانان گرامی ، وزراء اور دیگر معززین افتتاحی تقریب میں موجود تھے۔

اہم معاونت

لوسیڈ گروپ کو اس پلانٹ کی تیاری میں سعودی عرب کی وزارت سرمایہ کاری (میسا)، سعودی صنعتی ترقیاتی فنڈ (ایس آئی ڈی ایف) اور شاہ عبداللہ اکنامک سٹی (کے اے ای سی) سے نمایاں مدد ملی ہے اور یہ سعودی عرب کی معیشت کو متنوع بنانے کے تزویراتی ہدف کو تیز کرنے میں اہم کردار ادا کرے گا۔ لوسیڈ گروپ مملکت میں برقی نقل و حمل کی ترقی میں اہم کردار ادا کرے گا اور اس بات کو یقینی بنائے گا کہ 2030 تک مملکت میں فروخت ہونے والی نئی کاروں میں 30 فی صد بجلی سے چلنے والی ہوں۔اس طرح وہ سعودی عرب کے سبزاقدام کی لازمی ضرورت کی بھی حمایت کرے گا۔

لوسیڈ گروپ کے سی ای او اور سی ٹی او پیٹر رولنسن نے کہا کہ ’’ہم سعودی عرب میں ملک کے پہلے کار ساز پلانٹ کے افتتاح کی تاریخ رقم کرنے پر خوش ہیں۔ یہ پلانٹ ہماری ایوارڈ یافتہ الیکٹرک گاڑیاں تیار کرے گا اور زیادہ پائیدار اور متنوع معیشت کے لیے مملکت کے ویژن کی حمایت کرے گا‘‘۔

انھوں نے کہا کہ ’’سعودی عرب اپنے ویژن 2030 کے اہداف کی طرف بڑھ رہا ہے، ہماری تنصیب ملک کی الیکٹرک آٹوموٹیو صنعت اور سپلائی چین کی توسیع کی راہ ہموار کرے گی، اور سعودی حکومت کی مدد سے ہمیں برقی کاروں کی ٹیکنالوجی کی صنعت میں مقامی ٹیلنٹ کو آگے بڑھانے پر فخر ہے۔ ہم سعودی عرب اور اس سے باہر کے صارفین کو مملکت میں تیار شدہ گاڑیاں مہیّا کرنے کے منتظر ہیں‘‘۔

جدہ میں شاہ عبداللہ اکنامک سٹی میں واقع لوسیڈ کا کارساز پلانٹ۔
جدہ میں شاہ عبداللہ اکنامک سٹی میں واقع لوسیڈ کا کارساز پلانٹ۔

سعودی عرب میں لوسیڈ کی اے ایم پی -2 تنصیب نے سیمی ناک ڈاؤن (ایس کے ڈی) اسمبلی کا آغاز کر دیا ہے اور توقع ہے کہ یہ سالانہ 5،000 کاریں تیار کرے گی۔ ابتدائی آپریشن میں لوسیڈ ایئر وہیکل 'کٹس' کو دوبارہ جوڑا گیا ہے۔یہ امریکی ریاست ایریزونا کے شہر کاسا گرانڈے میں کمپنی کے یو ایس اے ایم پی-1 مینوفیکچرنگ پلانٹ میں پہلے سے تیار کی گئی ہیں۔ لوسیڈ کا مقصد اے ایم پی -2 کو دہائی کے وسط کے بعد مکمل بلڈ یونٹ (سی بی یو) کی پیداوار میں منتقل کرنا ہے ، جس میں ڈیڑھ لاکھ کاروں کی تیاری کی سالانہ اضافی گنجائش ہے۔

اے ایم پی -2 جدّت طرازی اور روزگار کے مواقع پیدا کرنے کے لیے ایک قوتِ محرکہ ثابت ہوگا۔ یہ سعودی ٹیلنٹ کو فروغ دے گا اور ماہرانہ تربیت فراہم کرے گا۔ ہیومن ریسورسز ڈویلپمنٹ فنڈ (ایچ آر ڈی ایف) کے ساتھ ایک معاہدے کے ذریعے لوسیڈ کو توقع ہے کہ وہ پہلے چند سال میں سیکڑوں سعودی شہریوں کو ملازمتیں دے گا اور بتدریج مقامی افرادی قوت کو ہزاروں تک بڑھائے گا۔

ویژن 2030 کے مطابق ، لوسیڈ اور ایچ آر ڈی ایف کی سرمایہ کاری کا مقصد ایک مضبوط ، ہُنرمند اور مقامی افرادی قوت کی تیاری کے لیے ٹیلنٹ کو راغب کرنا ، تربیت دینا اور برقرار رکھنا ہے۔

تزویراتی محل وقوع

جدہ کے قریب پلانٹ کا تزویراتی محل وقوع نئی قائم شدہ گھریلو سپلائی چین کو مزید بڑھانے اور وسعت دینے کے لیے ایک محرک کے طور پر بھی کام کرے گا۔اس سے مقامی سپلائرز کے لیے طلب پیدا ہوگی اور طویل مدت کی ترقی کو فروغ ملے گا۔ مملکت کے بحیرہ احمر کے ساحل پر جدہ کی پوزیشن پہلے ہی زمین اور سمندر کے ذریعے مضبوط سپلائی چین تک رسائی مہیا کرتی ہے اور لوسیڈ کو مستقبل میں اپنی تیار شدہ لگژری الیکٹرک گاڑیاں دوسرے علاقوں میں برآمد کرنے کے قابل بناتی ہے۔

لوسیڈ گروپ کے نائب صدر اور مینجنگ ڈائریکٹر برائے مڈل ایسٹ فیصل سلطان نے کہا کہ ’’آج کا دن ہم سب کے لیے فخر کا لمحہ ہے۔ ہم سعودی عرب کی تاریخ میں اہم کردار ادا کرتے ہیں اور ملک کے لیے طویل مدتی اقتصادی قدر پیدا کرتے ہیں۔ اس سال کے اوائل میں ہم سعودی عرب کی مارکیٹ میں پہلی اور جدید ترین الیکٹرک گاڑی لوسیڈ ایئر متعارف کرانے پر بہت خوش تھے۔آج ہمارے پلانٹ کا افتتاح ہمارے عالمی معیار کے لوسیڈ ایئر کو تیار کرنے کے لیے ہمارے پروڈکشن آپریشنز کا آغاز ہے‘‘۔

انھوں نے بتایا کہ کے اے ای سی میں اے ایم پی -2 ، ایریزونا میں ہمارے موجودہ اے ایم پی -1 پلانٹ کے علاوہ ، ہمیں دس سال کی مدت میں سعودی عرب کے ساتھ حال ہی میں ایک لاکھ گاڑیاں خرید کرنے کے معاہدے کو مؤثر طریقے سے پورا کرنے کی صلاحیت دیتا ہے۔اس معاہدے میں ابتدائی طور پر 50 ہزار گاڑیاں خرید کرنے کا وعدہ اور اسی مدت میں اضافی 50ہزار گاڑیاں خریدنے کا آپشن شامل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں