مجھے سعودی عرب میں زندگی پسند ، میرا تعلق صحرائی ثقافت سے ہے: ول سمتھ

سعودی عرب کے ہر دورے پر مجھے معلوم ہوتا ہے کہ یہ پہلے سے بہتر ہے: امریکی فلم سٹار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ہالی ووڈ فلم سٹار ول سمتھ نے پوڈ کاسٹ ’’ بگ ٹائم‘‘ میں گفتگو کے دوران سعودی عرب کے ساتھ اپنے تعلقات سے آگاہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس مرتبہ میں نے تیسری مرتبہ سعودی عرب کا دورہ کیا ہے۔ مجھے سعودی عرب سے محبت ہے اور اس کے ساتھ میرا گہرا تعلق ہے۔ مجھے سعودی عرب میں زندگی گزارنا پسند ہے، میرا تعلق صحرائی ثقافت سے ہے۔ انہوں نے کہا میں سعودی عرب کے ہر دورے پر فیصلہ کرتا ہوں کہ یہ ملک پہلے سے بھی بہتر ہے۔

ہالی ووڈ سٹار جدہ میں
ہالی ووڈ سٹار جدہ میں

انہوں نے کہا سعودی عرب میں میرا پہلا دورہ جدہ شہر کا تھا، پھر ہم سیر کے لیے نیوم چلے گئے۔ میں اپنے دوسرے دورے پر ریاض آیا ۔ میرے پاس اس ملک کی سیر کا شاندار موقع ہے۔ ول سمتھ بولے مجھے عام طور پر مشرق وسطیٰ سے تعلق کا احساس ہوتا ہے۔ جب بھی سورج طلوع ہوتا ہے، مجھے لگتا ہے کہ میں پچھلی زندگی میں جادوئی چراغ کا جن تھا، اس لیے میں یہاں سعودی عرب میں زندگی سے پیار کرنے آیا ہوں " صحرا کی ثقافت اور اس کی زندگی میرا اندرونی تعلق ہے۔

ول سمتھ جدہ میں ایک پروگرام میں شریک
ول سمتھ جدہ میں ایک پروگرام میں شریک

بگ ٹائم پوڈ کاسٹ پر ول اسمتھ نے خاص طور پر سعودی کھانوں سے اپنی محبت کا اظہار کیا اور کہا میں نے بہت سے مختلف مقامات اور ریستورانوں کا دورہ کیا اور سعودی کھانوں کا مزہ چکھا۔ میڈیا پروگرام کے پریزینٹر عمرو ادیب نے ان کے ساتھ مذاق کیا اور ان کے تجسس کو بڑھاتے ہوئے انہیں کبسہ اور جریش کھانے کے دعوت دی۔ یہ دونوں سعودی عرب کے مشہور پکوان ہیں۔ ول سمتھ نے ان کے خیال کا خیر مقدم کیا اور کہا پھر تو آج کی رات سعودی کھانے کی ایک بڑی رات ہے۔

ول سمتھ کا سعودی عرب میں نیوم میں  ایک انداز
ول سمتھ کا سعودی عرب میں نیوم میں ایک انداز

واضح رہے بگ ٹائم پوڈ کاسٹ کو سعودی جنرل انٹرٹینمنٹ اتھارٹی تیار کرتی ہے اور اسے ’’ ایم بی سی ون‘‘ پر دکھایا جاتا ہے۔ اس پوڈ کاسٹ میں عرب دنیا اور دنیا کے معروف سٹارز کی میزبانی کی جاتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں