.

بھارت اور عراق کے درمیان 30 سال بعد فضائی سروس بحال

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

بھارت اور عراق کے درمیان 30 سال سے تعطل کا شکار فضائی سروس بحال کردی گئی ہے۔ جمعرات کو بھارت سے پہلی پرواز مسافروں کو لے کر عراق کےتاریخی شہر النجف پہنچی۔

'اے ایف پی' کے نامہ نگارکے مطابق بھارت سے تیس سال کے بعد پہلی بار شیعہ زائرین عراق پہنچے ہیں۔

بھارت سے عراق کے لیے 30 سال بعد پہلی پرواز اترپردیش کے دارالحکومت لکھنئو سے عراق نجف شہر کے لیے روانہ ہوئی۔ النجف میں‌بھارتی شیعہ زائرین کے استقبال کے لیے عراقی حکام بھی موجود تھے۔

بغداد میں بھارتی سفیر پردیپ سنگھ نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہاکہ ہم کافی عرصے سے عراق کے ساتھ فضائی سروس کی بحالی کے لیے کوشاں تھے۔

سنہ 1990 میں کویت پر صدام حسین کے حملے کے بعد عراق پرعالمی فضائی پابندیاں عاید کردی گئی تھیں۔ اسی عرصے میں بھارت نے بھی بغداد سے فضائی سروس بند کر دی تھی۔

عراق کے وسطی شہر کربلا اور نجف اہل تشیع کے ہاں اہم ترین مذہبی اہمیت کے مقامات سمجھے جاتے ہیں جہاں بڑی تعداد میں اہل تشیع کے مزارات موجود ہیں۔