.

عدن ہوائی اڈے پر حملہ جنگی جرم ہے: یو این ایلچی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے لیے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے خصوصی ایلچی مارٹن گریفتھیس نے عدن ایئر پورٹ پر ہولناک حملے کو نئی یمنی حکومت کی تشکیل کو بدامنی اور مایوسی میں تبدیل کرنے کی دانستہ کوشش قرار دیتے ہوئے اس کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عدن ہوائی اڈے پر حملہ ایک کھلا جنگی جرم ہے۔

جمعرات کی شام یمنی وزیر خارجہ احمد بن مبارک کے ساتھ ٹیلی فون پر بات کرتے ہوئے مسٹر گریفیتھس نے کہا کہ وہ عدن ایئر پورٹ پہنچنے پر یمنی حکومت کے ارکان پر ہونے والے بزدلانہ حملے کی مذمت کرتے ہیں۔ اس حملے میں درجنوں عام شہری جاں بحق اور زخمی ہوئے ہیں۔ انہوں نے کہا یہ یہ ایک بزدلانہ کارروائی اور جنگی جرم ہے۔

اقوام متحدہ کے مندوب نے اپنے دفتر سے جاری ایک پریس بیان میں عدن میں‌ ہونے والے حملے کے نتیجے میں جاں‌ بحق افراد کے اہل خانہ سے تعزیت کی اور زخمیوں کی جلد صحت یابی کی‌ خواہش کا اظہار کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ یمن کے لیے کل ایک انتہائی افسوسناک دن تھا۔ عام شہریوں اور شہری تنصیبات کو نشانہ بنانا بین الاقوامی انسانی قانون کی سنگین خلاف ورزی ہے۔ عدن کے ساتھ ساتھ پورے ملک کے لیے یہ ایک قابل مذمت اور خوفناک حملہ ہے۔ انہوں‌ نے کہا کہ ہوائی اڈے پر سویلین افراد پر حملہ جنگی جرم ثابت ہو سکتا ہے۔