کرونا ایس اوپیز کی خلاف ورزی اور شادی میں ہیلی کاپٹر کے استعمال پر دلہا کو جیل جانا پڑ گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

اردن میں ایک شہری کی جانب سے کرونا وبا کے پیش نظر شادی میں مہمانوں کی مقرر تعداد سے بڑھ کر لوگوں کو شریک کرنے اور شادی میں ہیلی کاپٹر استعمال کرنے پر دلہا اور اس کےوالد کو گرفتار کرلیا گیا ہے۔

یہ واقعہ اردن کے الزرقا شہر میں پیش آیا۔ الزرقا کے گورنر حجازی عساف کے دفتر نے 'العربیہ' چینل کو بتایا کہ ایک مقامی شہری نے اپنی شادی کی تقریب میں مہمانوں کی مقرر کردہ تعداد سے بڑھ کر 300 افراد کو اپنے نجی فارم ہاوس پر مدعو کیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ شادی کی تقریب کے حوالے سے دلہا اور اس کے والد نے وزارت صحت اور وزارت دفاع کے مقرر کردہ ایس اوپیز کی خلاف ورزی کی ہے۔ اس نے شادی کے لیے ہیلی کاپٹر کا استعمال کرکے وزارت دفاع کے سیکیورٹی کے حوالے سے وضع کردہ اصولوں کی بھی خلاف ورزی کی ہے۔

حجازی عساف نے بتایا کہ پولیس کو معلوم ہوا کہ ایک شخص نے اپنے نجی فارم ہاوس میں شادی کی تقریب برپا کررکھی ہے جہاں اس نے 300 افراد کو مدعو کیا ہے۔ پولیس نے فوری کارروائی کرکے دلہا اور اس کے والد کو قانون کی خلاف ورزی پر گرفتار کرلیا ہے۔

عساف کا کہنا ہے کہ فارم ہاوس کے مالک کو بھی غیرقانونی شادی کی تقریب منعقد کرنے کا نوٹس بھیجا گیا ہے جس میں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر اسے وارننگ دی گئی ہے۔

ادھر اربد کے گورنری کے گورنر رضوان العتوم نے بتایا کہ پولیس نے شادی کے حوالے سے وضع کردہ قانون کی خلاف ورزی پر دلہا کو گرفتار کیا گیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ دلہا نے اپنی شادی کی تقریب میں 20 سے زاید افراد کو مدعو کر رکھا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں