امریکا نیٹوحلیف ترکی کوایف 16 لڑاکا طیارے فروخت کرے:جوبائیڈن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

امریکی صدرجو بائیڈن نے کہا ہے کہ ان کے ملک کو ترکی کو ایف 16 لڑاکا طیاروں فروخت کرنے چاہییں لیکن ان کا کہنا ہے کہ ایک عرصے سے التوا کا شکار اس سودے کی تکمیل کے لیے کانگریس کی منظوری درکار ہے۔

صدر بائیڈن نے جمعرات کو ایک بیان میں کہا کہ ’’ہمیں انھیں (ترکی کو)ایف 16 جیٹ طیاروں کو فروخت کرنا چاہیے اور ان کے پاس پہلے سے موجود جیٹ طیاروں کو بھی جدید بنانا چاہیے‘‘۔

انھوں نے مزید کہا:’’مجھے ایسا کرنے کے لیے کانگریس کی منظوری درکار ہے اور میں سمجھتا ہوں کہ میں ایسا کرسکتا ہوں‘‘۔

صدربائیڈن کا ترکی کو طیاروں کی فروخت کی حمایت کا بیان ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب انقرہ نے فن لینڈ اور سویڈن کی نیٹو کی رُکنیت کے لیے کوشش کی مخالفت ترک کردی ہے اور ان کی فوجی اتحاد میں شمولیت کی حمایت کا اظہار کیا ہے۔

البتہ صدر بائیڈن نے کہا کہ ترکی کی جانب سے فن لینڈ اور سویڈن کی نیٹو میں شمولیت کی منظوری اورایف 16 کی فروخت کوئی ’’حمایت کے بدلے میں حمایت‘‘ والا معاملہ نہیں ہے۔

صدر بائیڈن سے قبل پینٹاگون کی ایک سینیر عہدہ دار نے کہا ہے کہ امریکا نیٹو کی سلامتی کے لیے تعاون کے ضمن میں ترکی کو ایف 16 لڑاکا طیاروں کی فروخت پرآمادہ ہے اور وہ ترکی کے ایف 16 لڑاکا طیاروں کی جدید کاری کے معاہدے کی حمایت کرتا ہے۔

واضح رہے کہ امریکا نے2019 میں ترکی کوایف 35 لڑاکا طیاروں کی تیاری کے پروگرام سے خارج کردیا تھا کیونکہ اس نے روسی ساختہ ایس 400 میزائل دفاعی نظام خرید کرنے کے معاہدے سے دستبردار ہونے سے انکارکردیا تھا لیکن اب ایسا لگتا ہے کہ انقرہ نے فن لینڈ اورسویڈن کی نیٹو میں شمولیت کی کوشش کی مخالفت ختم کرنے کے عوض امریکا سمیت عالمی برادری سے بعض رعایتیں حاصل کی ہیں۔

امریکی حکام کے مطابق دونوں ملکوں کے درمیان لڑاکا طیاروں کے تنازع کو طے کرنے کے لیے گذشتہ کئی ماہ سے بات چیت جاری ہے۔ترک صدررجب طیب ایردوآن نے گذشتہ ماہ اس کی تصدیق کی تھی اور کہا تھا کہ ان کا ملک ایف 35 کے بجائے ایف 16 لڑاکا طیارے خرید کرنے کے لیے امریکا کے ساتھ بات چیت کر رہا ہے۔

بتایا گیا ہے کہ ترکی نے اب ایف 35 پروگرام کا حصہ نہ بننے کے عوض ایک اور معاہدہ کیا ہے۔اس کے تحت وہ امریکا سے نئے ایف 16 خریدے گا جبکہ اپنے موجودہ 80 پرانے ایف 16 طیاروں کے بیڑے کو اپ گریڈ کرے گاکیونکہ فی الوقت انھیں جدیدکاری کی اشد ضرورت ہے۔

سویڈن اورفن لینڈ کے بارے میں میڈرڈ میں نیٹوسربراہ اجلاس کے معاہدے کے بعد امریکا کی اسسٹنٹ سیکرٹری برائے دفاع اور بین الاقوامی سلامتی امور سیلیسٹی والنڈر نے صحافیوں کے ساتھ بات چیت میں کہا کہ محکمہ دفاع ایف 16 بحری بیڑے کے لیے ترکی کے جدید کاری کے منصوبوں کی مکمل حمایت کرتا ہےکیونکہ یہ نیٹو کی سلامتی کے علاوہ خود امریکی سلامتی میں بھی ایک تعاون ہے‘‘۔

ان کا کہنا تھا کہ کہ ترکی ایک ’’انتہائی قابل، تزویراتی نیٹو اتحادی‘‘ہے اور اس کی مضبوط دفاعی صلاحیتیں نیٹو کی مضبوط دفاعی صلاحیتوں میں معاون ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں