غزہ میں جنگ بندی اہم ہوگئی: فیصل بن فرحان، ریڈ کراس کے ڈائریکٹر سے گفتگو

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان بن عبداللہ نے ریڈ کراس کی بین الاقوامی کمیٹی کے صدر مِرجانا سپولیجارِک کو کہا ہے کہ غزہ میں فوری جنگ بندی انتہائی اہمیت اختیار کر گئی ہے۔ یہ بات ایک فون کال کے دوران ہوئی جس میں دونوں رہنماؤں نے غزہ کی پٹی اور اس کے گردونواح میں تازہ ترین پیشرفت اور خطے میں فوجی کشیدگی کے حوالے سے پیش رفت پر تبادلہ خیال کیا۔

فیصل بن فرحان نے شہریوں اور ہسپتالوں پر اسرائیلی افواج کے حملوں کو روکنے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ اسرائیل کے ایسے حالیہ حملوں میں الشفاء میڈیکل ہسپتال پر حملہ شامل ہے۔

سعودی وزیر خارجہ نے ضروری امداد اور طبی سامان پہنچانے کے لیے انسانی ہمدردی کی راہداریوں کو فوری طور پر محفوظ بنانے کی اہمیت پر بھی زور دیا اور کہا کہ غزہ کی پٹی میں انسانی امداد کے قافلوں کے فوری داخلے کو سہولت فراہم کی جانی چاہیے تاکہ وہاں کے شہریوں کو درپیش مصائب کو کم کیا جا سکے۔ .

یاد رہے سات اکتوبر کو شروع ہونے والی لڑائی کو 40 روز مکمل ہوگئے ہیں اور اب تک غزہ کی پٹی میں 11500 فلسطینی شہید ہوگئے ہیں۔ ان شہدا میں 4710 بچے بھی شامل ہیں۔غزہ کی پٹی میں زخمیوں کی تعداد 29,800 تک پہنچ گئی لاپتہ افراد کی تعداد 3,640 تک پہنچ گئی جن میں 1,770 بچے بھی شامل ہیں۔

حماس کے حملے میں 1200 کے لگ بھگ اسرائیلی ہلاک ہوئے۔ 27 اکتوبر سے اسرائیلی فوج نے غزہ کے اندر زمینی کارروائی شروع کردی۔ اس زمینی کارروائی میں اسرائیل کے 50 کے لگ بھگ فوجی ہلاک ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں