نیو یارک: غزہ کو تباہ کرنے کے اسرائیلی جواز کی حامی گورنر نے معافی مانگ لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غزہ میں تقریبا 29 ہزارفلسطینی قتل ، 23 لاکھ فلسطینیوں کو بے گھر کیے جانے اور پورے غزہ کو تباہ کرنے کے موضوعات کے ماحول میں یہودی انسان دوستی کی تقریب میں گورنر نیویارک کیتھی ہوچول نے غزہ کی تباہی کے اسرائیلی جنگ کا جواز پیش کیا تھا۔ مگر اب وہ اس پر شرمندہ اور معافی کی خواستگار ہیں۔

نیویارک کی 65 سالہ خاتون گورنر کا غزہ کی تباہی کے حق میں تبصرہ وائرل ہو گیا تھا ، جس پر بہت زیادہ بحث چھڑ گئی۔ اسی مین انہوں نے غزہ کی تباہی کا جواز پیش کرتے ہوئے تمثیلاً کینیڈا کو بھی محتاط رہنے کا مشورہ دیا تھا کہ وہ کہیں اپنے آس پاس کی 'بھینس' پر حملہ نہ کر دے کہ اس کے بعد مجھے افسوس سے کہنا پڑے گا کہ ہمارا دوست کینیڈا اگلے دن موجود نہیں ہو گا۔'

کیتھی ہوچول ' یونائٹڈ جیوش اپیل فیڈریشن آف نیو یارک کے زیر اہتمام یہودیوں کی انسان دوستی کے موضوع پر تقریر کر رہی تھیں۔ کیتھی ہوچول نے کہا ' یہ فطری رد عمل تھا جو اسرائیل نے کیا آپ کو اپنے دفاع کا حاصل ہے، اس لیے یہ یقینی بنانا کہ دوبارہ یہ واقعہ دوبارہ نہیں ہو گا ضروری تھا۔'

جمعہ کی رات ایک بیان میں گورنر نے اپنے 'ریمارکس' پر افسوس ظاہر کرتے ہو ئے کہا 'مجھے مناسب الفاظ استعمال نہ کرنے پر افسوس ہے میں اس پر معافی چاھتی ہوں مجھے اب احساس ہوا ہے کہ یہ الفاظ کمیونٹی کے بعض افراد کے لیے تکلیف دہ ہوسکتے تھے۔'

'جب کہ میں اسرایئل کی حمایت میں بڑی واضح ہوں اور سمجھتی ہوں کہ اس نے اپنے حق دفاع کا استعمال کیا ہے، تاہم میں نے پہلے بھی بار بار یہ کہا ہے اور اب بھی اس پر یقین رکھتی ہوں فلسطینی شہریوں کی ہلاکتوں سے گریز کی کوشش کرنی چاہیے تھی۔ نیز غزہ کے لوگوں کے لیے انسانی بنیادوں پر امداد کی فراہمی ممکن بنانی چاہیے۔'

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں