یمن : حجہ ، مارب اور المخا میں باغیوں پر اتحادی فضائی حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

یمن کے صوبے تعز میں سرکاری فوج نے مقبنہ کے محاذ پر باغیوں کے ٹھکانوں کو حملے کا نشانہ بنایا۔ کارروائی کے نتیجے میں محاذ کے نواح میں واقع دیہات کا کنٹرول واپس لے لیا گیا ہے۔ تعز میں الزہراء اور فضائی دفاع کے کیمپ کے اطراف کے علاقوں میں شدید جھڑپوں میں 6 باغی مارے گئے۔

ادھر الحدیدہ صوبے میں الخوخہ ضلع کے علاقے موشج میں عرب اتحاد کے طیاروں نے اسلحے کا ایک ڈپو تباہ کر دیا۔ اس کے علاو ساحلی ضلع المخا ، حجہ صوبے اور مارب صوبے کے ضلع صراوح میں باغی ملیشیاؤں کے ٹھکانوں پر شدید فضائی حملے کیے گئے۔

اس دوران باغیوں کی جانب سے تعز میں پیش قدمی کی کوششیں جاری رہیں۔ ملیشیاؤں نے الزہراء اور فضائی دفاع کے کیمپ کے اطراف کے علاقوں پر قبضہ کرنے کی کوشش کی تاہم انہیں منہ کی کھانی پڑی اور درجنوں ارکان ہلاک اور زخمی ہو گئے۔

دوسری جانب ذمار صوبے میں حوثی اور معزول صالح کی ملیشیاؤں کے پاس درجنوں مقتول حوثیوں کی لاشیں پہنچیں۔ ان میں تعز اور المخا کے معرکوں میں مارے جانے والے سینئر میدانی کمانڈر شامل ہیں۔ ذمار ہسپتال کے سرد خانے کے ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ یمن میں آئینی حکومت کا تختہ الٹنے کے بعد سے اب تک ہسپتال میں صوبے سے تعلق رکھنے والے 3500 سے زیادہ افراد کی لاشیں آ چکی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں