سرحد پر سعودی فوج کی کارروائی ، 15 حوثی باغی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی فوج نے ہفتے کے روز مملکت کی سرحد میں دراندازی کرنے والے حوثی ملیشیا اور معزول صالح کے پاسداران کے ارکان کے خلاف بڑی کارروائی کی۔

"العربیہ" کے نمائندے کے مطابق حوثی ملیشیا کے جنگجو مملکت کے صوبے عسیر کے مقابل سعودی عرب اور یمن کے درمیان سرحدی علاقے میں داخل ہو گئےاور سعودی سرحد پر پہنچنے کی کوشش کی۔ اس کوشش کا مقصد اولین صفوں میں موجود عسکری نگرانی کے دستوں کو نشانہ بنانا تھا۔ تاہم سعودی فوج کے خصوصی گروپ نے 4 گھنٹے جاری رہنے والے مقابلے کے بعد اس کوشش کو پسپا کر ڈالا۔ اس دوران ملیشیا کے ارکان کا محاصرہ کر کے انہیں بھاری ہتھیاروں سے نشانہ بنایا گیا جس کے نتیجے میں 15 سے زیادہ جنگجو مارے گئے جب کہ دیگر عناصر فرار ہو گئے۔

ادھر ہفتے کی ہی رات جازان صوبے کے ضلع الطوال میں سعودی اپاچی ہیلی کاپٹروں نے راکٹ داغنے والے پیڈ کو تباہ کر دیا۔ یہ کارروائی یمنی باغی ملیشیاؤں کی جانب سے سعودی ضلعے کی سمت راکٹ داغے جانے کے بعد کی گئی۔ علاوہ ازیں سعودی فوج کے توپ خانوں نے یمن کے علاقے حرض میں حوثی ملیشیا کے عناصر کے ایک مجمع کو گولہ باری کا نشانہ بنایا، یہ لوگ سعودی عرب اور یمن کے درمیان سرحد کو پار کرنے کا ارادہ رکھتے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں