.

دہشت گردی کے خلاف جنگ میں عراق کے ساتھ ہیں:بحرین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خلیجی ریاست بحرین کے وزیرخارجہ الشیخ خالد بن احمد آل خلیفہ اعلیٰ اختیاراتی سرکاری وفد کے ہمراہ خصوصی دورے پر عراق پہنچے ہیں جہاں انہوں نے گذشتہ روز عراقی وزیراعظم حیدرالعبادی سے ان کے دفتر میں ملاقات کی۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق بحرینی وزیرخارجہ اور عراقی وزیراعظم کے درمیان ہونے والی بات چیت میں خطے کی موجودہ صورت حال، دہشت گردی کے خلاف جنگ اور دوطرفہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

وزیراعظم العبادی کے دفتر سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ بحرینی وزیرخارجہ اور ان کے ہمراہ آئے وفد نے انہیں موصل کو داعشی دہشت گردوں سے آزاد کرانے پر مبارک باد پیش کی۔ بحرینی وزیرخارجہ نے یقین دلایا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں منامہ بغداد کے ساتھ ہرممکن تعاون جاری رکھے گا۔ اس موقع پر دونوں ملکوں کی قیادت نے دو طرفہ سیاسی، اقتصادی، تجارتی اور ثقافتی تعلقات کو فروغ دینے سے اتفاق کیا۔

العبادی کا کہنا ہے کہ داعش اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں عراق نے غیرمعمولی کامیابی حاصل کی ہے۔ بہت سے علاقے داعش سے آزاد کرائے گئے جبکہ دہشت گردوں کے زیرتسلط دوسرے علاقوں کی بازیابی کے لیے تیاری جاری ہے۔

العبادی نے دہشت گردی اور فرقہ واریت کی لعنت سے چھٹکارا پانے کے لیے خطے کے تمام ممالک کو مل کر کوششیں جاری رکھنے پر زور دیا۔