.

مصر: سیناء آپریشن میں دہشت گردوں کے ٹھکانے تباہ، ریڈیو سینٹر کا انکشاف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں فوج نے "سيناء 2018" آپریشن کے گیارہویں روز ہونے والی کارروائیوں کی تفصیلات جاری کی ہیں۔

فوجی ترجمان کرنل تامر الرفاعی کے مطابق مصری فضائیہ نے دہشت گردوں کے 8 اہداف کو تباہ کر دیا۔ اس دوران تخریب کار عناصر کی روپوشی اور پناہ کے 179 مقامات کو توپ خانوں کی گولہ باری کا نشانہ بھی بنایا گیا۔

ترجمان نے بتایا کہ دہشت گردوں کے ساتھ فائرنگ کے تبادلے کے بعد 4 انتہائی خطرناک تکفیریوں کا خاتمہ کر دیا گیا۔ اس دوران ان کے قبضے سے ہتھیار اور گولہ بارود برآمد کر لیا گیا۔ اس کے علاوہ دہشت گردوں کے زیر استعمال ایک وائرلیس ریڈیو براڈ کاسٹنگ سینٹر کے انکشاف کے بعد اسے تباہ کر دیا گیا۔

فوجی ترجمان کے مطابق آپریشن کے گیارہویں روز 112 مطلوب اور مشتبہ افراد کو گرفتار کیا گیا اور نمبر پلیٹوں کے بغیر 13 گاڑیوں اور 27 موٹر سائیکلوں کو بھی قبضے میں لے لیا گیا۔

فوج کے بیان میں بتایا گیا کہ دہشت گردوں کے زیر استعمال زیرِ زمین پناہ گاہوں سے بڑی تعداد میں دھماکا خیز آلات ، گولہ بارود اور وائرلیس سیٹس ملے جب کہ بعض مقامات پر کئی خفیہ خندقوں کا بھی انکشاف ہوا جن کے اندر ایندھن کی بڑی مقدار موجود تھی۔

مصری فوج کے اعلان کے مطابق آپریشن کے علاقے میں 13 کھیت بھی تباہ کیے گئے جہاں بینگو اور خشخاش کے پودے اگائے گئے تھے جن کا استعمال منشیات کی تیاری میں بھی ہوتا ہے۔ اس دوران 10.5 ٹن تیار منشیات قبضے میں لے لی گئی۔

مصری فوج نے اس امر کی تصدیق کی ہے کہ مسلح افواج اور پولیس کے مشترکہ گروپوں نے آپریشن کے علاقے میں مرکزی راستوں اور صحرائی علاقوں میں خصوصی گشتی ٹیموں کا انتظام کیا ہے جس کے نتیجے میں کئی مشتبہ اور جرائم پیشہ افراد گرفت میں آئے۔