.

حوثی باغی ایران کے ایماء پر سعودی عرب پر حملے کر رہے ہیں: یمن

عالمی برادری حوثیوں کو اسلحہ کی اسمگلنگ روکے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی حکومت نے کہا ہے کہ حوثی ملیشیا کی جانب سے سعودی عرب پر بیلسٹک میزائلوں اور بغیر پائلٹ ڈرون طیاروں کے ذریعے حملوں کے پیچھے ایران کا ہاتھ ہے۔ حوثی ایرانی فیصلوں پرعمل درآمد کرتے ہوئے سعودی عرب پر حملے کر رہے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق یمنی حکومت کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ ایران عالمی سطح پر دباؤ میں نرمی اور بین الاقوامی تنہائی کے جاری رہتے ہوئے خطے میں اپنی تخریبی پالیسی پر عمل پیرا ہے۔ یمن میں ایرانی مداخلت عرب ممالک میں تہران کی درندازی کا کھلا ثبوت ہے۔

یہ بیان یمن کے عبوری دارالحکومت عدن میں وزیراعظم احمد بن دغر کی زیرصدارت کابینہ کے اجلاس کے بعد جاری کیا گیا۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ یمن میں ایرانی مداخلت نے تہران کے تخریبی کردار کو پوری دنیا کے سامنے بے نقاب کردیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی عرب پر داغے جانے والے بیلسٹک میزائل اور ڈرون طیارے ایرانی ساختہ ہیں۔ ایران مقامی سطح پر ہتھیار تیار کرکے حوثی باغیوں کو دے رہا ہے۔ یمنی حکومت نے حوثی ملیشیا کی طرف سے اسلحہ کی اسمگلنگ کو عالمی قراردادوں کی کھلی خلاف ورزی قراردیتے ہوئے عالمی برادری پر حوثیوں کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا۔