حوثی باغیوں کے الحدیدہ میں شہریوں کے گھروں پر دھاوے، امدادی سامان لوٹ لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن میں ایران نواز حوثی باغیوں نے مغربی ساحلی شہر الحدیدہ میں شہریوں کے گھروں میں گھس کر انہیں زدو کوب کرنے اور گھروں میں لوٹ مار کا بازار گرم کر رکھا ہے۔

مقامی ذرائع نے بتایا کہ حوثی شدت پسندوں نے گذشتہ روز الحدیدہ میں شہریوں کے گھروں پر چھاپے مارے اور عرب اتحادی ممالک کی طرف سے جنگ کے متاثرین کو دیا گیا امدادی سامان بھی لوٹ لیا۔

’العربیہ‘ کے مطابق عرب اتحادی فوج کی طرف سے الحدیدہ میں جنگ سے متاثرہ علاقوں قضبہ، دخان، کدف مراد، بیوت الحرابیہ اور الدریھمی ڈاریکٹوریٹ میں شہریوں میں خوراک اور ادویات تقسیم کی گئیں۔ امدادی سامان کی تقسیم کے بعد حوثی باغیوں نے شہریوں کے گھروں پر چھاپے مارے اور ان کے گھروں سے امدادی سامان لوٹ لیا۔

ادھرایک دوسری پیش رفت میں یمن کی سرکاری فوج نے الدریھمی میں دو مقامات پر باغیوں کا حملہ پسپا کردیا۔ باغیوں نے المخا اور الحدیدہ شہر کے درمیان ساحل سمندر کے قریب واقع سڑک بندکرنے کی کوشش کی تو اسے ناکام بنا دیا گیا۔ اس کے علاوہ التحیتا ڈاریکٹوریٹ میں بھی باغیوں نے سرکاری فوج پرحملے کی کوشش کی۔ فریقین کے درمیان دس گھنٹے تک جھڑپ جاری رہی۔ اس دوران سرکاری فوج نے باغیوں کے خلاف کارروائی میں اپاچی ہیلی کاپٹر کا استعمال کیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں