.

مستقبل قریب میں سعودی عرب گیس بھی برآمد کرے گا: وزیر توانائی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے وزیر توانائی شہزادہ عبد العزیز بن سلمان نے کہا کہ مملکت مستقبل میں گیس کی برآمد کے لیے کام کر رہی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سعودب گیس کے ذخائر سے گیس کی تیاری کے لیے بین الاقوامی سطح پر بڑے پیمانے اور وسیع تر منصوبوں پر کام کررہی ہے۔

شہزادہ عبد العزیز بن سلمان نے کل اتوار کے روز مشرقی علاقے منعقدہ "سابک 2020 کانفرنس" کی سرگرمیوں کے افتتاح کے موقع پر کہا کہ تیل اور گیس کے حصول سے توانائی کے شعبے میں سعودی عرب ترقی کی ایک اور جست لگائے گا۔ ہم ہوا کی ذریعے حاصل ہونے والے شفاف توانائی کو متعارف کراتے ہوئے بجلی کے نظام کو مربوط کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ وزارت توانائی کے قیام کا بنیادی بنیادی مقصد توانائی کے ذرائع کی ترقی کو بڑھانا اور ان ذرائع کا ایک مربوط نظام تشکیل دینا ہے۔

سعودی وزیر توانائی نے انکشاف کیا کہ مملکت ایک ایسے موضوع کا اعلان کرنے جا رہی ہے جو توانائی کے شعبے میں فخر کا باعث ہوگا۔ مستقبل قریب میں ہم اس کا اعلان کریں گے۔ جس پروگرام کا آنے والے دنوں میں اعلان ہوگا وہ ایک قومی پروگرام ہے۔ یہ پروگرام میں کاربن معیشت سے متعلق ہوگا جس میں ارامکو،سابک ، کاسٹ ، کیپسارک ، سی ڈی ایم ، ڈی او ای ، جی 20 سیکرٹریٹ شامل ہوں گے۔