سعودی عرب میں پانچ ماہ میں چار لاکھ سیاحتی ویزے جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی حکومت نے کہا ہے کہ وہ مملکت میں دینی سیاحت کے ساتھ ساتھ سیاحت کے دوسرے پہلوئوں پر بھی تیزی سے کام کررہی ہے۔ گذشتہ پانچ ماہ کے دوران حکومت نے مملکت میں سیاحت کے لیے چار لاکھ عمومی ویزے جاری کیے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی عرب میں سیاحت اور قومی ثقافتی ورثہ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے چیئرمین احمد الخطیب نے کل سوموار کے رز بتایا کہ مملکت نے مذہبی سیاحت کے فریم ورک کے باہرغیرملکی سیاحوں کے لیے اپنے دروازے کھولنے کے بعد اب تک تقریبا چار لاکھ سیاحتی ویزے جاری کیے ہیں۔
ان کا کہنا تھا کہ ان ویزوں میں حج اور عمرہ کے لیے جاری کردہ ویزے شامل نہیں ہیں۔ حکومت 2030ء تک مقامی اور بین الاقوامی سیاحوں کی تعداد کو 10 کروڑ تک لے جانا چاہتی ہے۔

ایک سوال کے جواب میں الخطیب نے کہا کہ بنیادی ڈھانچہ موجودہ سیاحت کے لیے ایک چیلنج ہے اور ہم اس چیلنج سے جلد از جلد نمٹنا چاہتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ سعودی عرب کے پاس سیاحوں کے لیے بے بہا خزانے ہیں اور مملکت قدرتی مقامات سے بھری پڑی ہے۔ سیاحت کے فروغ کے لیے زیادہ سے زیادہ سرمایہ کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مذہبی سیاحت سے ہٹ کر عمومی سیاحت کے لیے پروازوں میں اضافے اور قیام کے لیے ہوٹل کے کمروں کی تعداد میں اضافے کی اشد ضرورت ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں