مکہ کا کلاک ٹاور بادلوں کی آغوش میں۔ دلچسپ مناظر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب میں بارش کے موسم کے دوران بادلوں نے حرم مکی سے کچھ فاصلے پرموجود مکہ کلاک ٹاور کو اپنے گھیرےمیں لے لیا۔ بادلوں میں گھرجانے کے بعد ٹاور پرموجود گھڑیال دھندلا ہوگیا۔ یہ دلفریب منظر سوشل میڈیا پر بہت زیادہ پسند کیا جا رہا ہے۔

سوشل میڈیا پر صارفین نے اسے ’حیران کن قدرتی آرٹ پینٹنگ‘ قرار دیا۔

خیال رہے کہ مکہ کلاک ٹاور پر نصب گھڑی دنیا کی بڑی گھڑیوں میں سے ایک ہے۔ اس گھڑیال کو پہلی بار سنہ 2008ء میں آپریٹ کیا گیا تھا۔ چالیس میٹر طویل گھڑی زمین سے 400 میٹر بلند ہے۔ یہ گھڑی ٹاور کے اوپر چار سمت میں موجود ہے۔ سامنے اور عقب کی طرف کی گھڑی 43 میٹر لمبی اور 43 میٹر چوڑی ہے۔ جب کی اطراف کی گھڑیاں 43میٹر طویل اور 39 میٹر چوڑی ہیں۔ یوں مکہ گھڑیال کا مجموعی وزن 36 ٹن ہے۔ چاروں سمتوں میں موجود گھڑیوں کے اوپر لفظ ’اللہ‘ جلالہ دور سے دیکھا جا سکتا ہے جب کہ اس کےدرمیان میں تلوار اور کھجور کا نشان ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں