غزہ میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اوردہشت گردی کی تمام شکلوں کومستردکرتے ہیں: لاوروف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

منگل کو روسی وزیر خارجہ سرگئی لاوروف نے غزہ میں بین الاقوامی انسانی قانون کی خلاف ورزی کرنے والے دہشت گردی کے تمام مظاہر کی مذمت کی ہے۔

یہ بات انہوں نے ماسکو میں عرب لیگ اور اسلامی تعاون تنظیم کے متعدد وزرائے خارجہ کے ساتھ ملاقات کے آغاز پر کہی۔

لاوروف نے کہا کہ "غزہ کی پٹی میں پہنچنے والی انسانی امداد کی مقدار بہت کم ہے۔ ترجیح جنگ بندی، امداد کا داخلہ اور قیدیوں کی رہائی ہے جو یقینی بنائی جائے‘‘۔

روسی وزیر خارجہ نے قطری ثالثی کے کردار پر بات کرتے ہوئے حماس اور اسرائیل کے درمیان قیدیوں کے معاہدے تک پہنچنے کی کوششوں کی تعریف کی۔

لاوروف نے مشرق وسطیٰ میں دو ریاستی حل تک پہنچنے کے لیے بیرونی مداخلت سے دور ایک طریقہ کار کا جائزہ لینے کی ضرورت پر زور دیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ "ہمیں دو ریاستی حل پر مبنی امن عمل شروع کرنے کی تیاری کرنی چاہیے۔"

انہوں نے نشاندہی کی کہ فلسطین کے موجودہ بحران کے حل میں عرب اور اسلامی ممالک بنیادی کردار ادا کرسکتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں