فلسطین اسرائیل تنازع

اسرائیلی جیل میں نوجوان فلسطینی قیدی جاں بحق: جیل سروس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

جیل سروس نے پیر کو کہا کہ ایک 23 سالہ فلسطینی قیدی اسرائیلی جیل میں انتقال کر گیا ہے اور مزید کہا کہ وہ قیدی کی موت کے حالات کا جائزہ لے رہے تھے۔

جیل سروس نے ایک بیان میں کہا کہ مقبوضہ مغربی کنارے کے نابلس سے تعلق رکھنے والا یہ شخص اسرائیل کے شمال میں واقع میگیڈو جیل میں انتقال کر گیا۔

بیان میں قیدی کا نام لیے بغیر کہا گیا کہ اسے جون 2022 میں گرفتار کیا گیا تھا اور بعد میں "سکیورٹی جرائم" کے لیے جیل بھیج دیا گیا۔

سروس نے کہا، "جیسا کہ اس طرح کے تمام واقعات میں ہوتا ہے، (اس کی موت کے) حالات کا جائزہ لیا جائے گا۔"

فلسطینی اتھارٹی کے زیرِ حراست افراد کے کمیشن نے ایک قیدی کی موت کی تصدیق کی لیکن مزید معلومات کی توثیق کرنے سے قاصر تھی۔

جیل سروس نے کہا کہ قیدی فلسطینی صدر محمود عباس کی تحریک الفتح سے وابستہ تھا۔

گذشتہ ماہ اسرائیلی پولیس نے کہا تھا کہ انہوں نے تشدد کے الزامات کے بعد ایک اور فلسطینی قیدی کی موت کی تحقیقات کے لیے جیل کے 19 محافظوں سے تفتیش کی۔

فلسطین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی وافا کے مطابق مغربی کنارے کے علاقے قلقیلیہ سے تعلق رکھنے والا 38 سالہ طائر ابو اصاب نومبر میں اسرائیلی جیل کے محافظوں کی پٹائی کے بعد انتقال کر گیا تھا۔

اسرائیل میں تشدد مخالف عوامی کمیٹی نے کہا کہ ابو اصاب کی موت نے "سنگین شبہ پیدا کیا ہے کہ آئی پی ایس (اسرائیل جیل سروس) کو ایک پیشہ ور اسیری ادارے سے انتقامی اور تعزیری قوت میں تبدیل ہو رہی ہے۔"

ایڈوکیسی گروپ نے اس وقت کہا، "چھ قیدی پہلے ہی جیل میں مر چکے ہیں،" اور مزید کہا کہ "بدسلوکی اور موت کے تمام واقعات کی فوری طور پر تحقیقات ہونی چاہیے۔"

7 اکتوبر کو جس دن جنوبی اسرائیل پر حماس کے ایک مہلک حملے نے جنگ شروع کر دی تھی، اسرائیل کی جیل سروس نے اعلان کیا تھا کہ اس نے فلسطینی قیدیوں پر نئی پابندیاں عائد کر دی تھیں۔

حکام نے کہا قیدی اب اپنے سیل نہیں چھوڑ سکتے ہیں، ملاقات یا کینٹین سے کھانا خریدنے کی اجازت نہیں ہوگی اور نہ ہی ان کے بجلی کے آؤٹ لیٹس میں بجلی ہوگی۔

فلسطینی قیدیوں کے کلب کے مطابق دسمبر کے اوائل تک اسرائیلی جیلوں میں تقریباً 7,800 فلسطینی قیدی تھے۔ یہ ایک وکالت گروپ ہے جو الحاق شدہ مشرقی یروشلم اور مغربی کنارے سے قیدیوں کی تعداد کا شمار رکھتا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں