سعودی عرب: نیوم میں نئی پہاڑی سیرگاہ ایکویلم کے منصوبے کا افتتاح

منظر عام پر آنے کے لیے تیار تازہ ترین منزل میں ہوٹل کی رہائش، اپارٹمنٹس، ریستوران اور تفریحی زون شامل ہوں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے 500 بلین ڈالر کے کاروباری و سیاحتی منصوبے نیوم میں تازہ ترین لگژری منزل ایکولم کے منصوبے کا افتتاح کیا گیا ہے۔

نیوم انتظامیہ کے مطابق "پہاڑوں کے اندر سرایت شدہ تجرباتی جگہ" کے طور پر تشہیر کردہ ایکولم 450 میٹر بلند پہاڑی سلسلے کے اندر تعمیر کیا جائے گا۔ سیرگاہ تک رسائی حاصل کرنے کے لیے سیاح دنیا کی پہلی تیرتی ہوئی مرینا پر سوار ہوں گے اور ایک پوشیدہ زیر زمین نہر کے ذریعے ایکویلم میں داخل ہونے کے لیے خصوصی طور پر ڈیزائن کیے گئے جہاز کا سفر کریں گے۔

اندر داخلے کے بعد زائرین ایک 100 میٹر بلند عمودی عمارت کی خوبصورتی کھو ہو جائیں گے، جس کا احاطہ پانی سے آسمان تک پھیلا ہوا ہے۔ زیرِ زمین ڈیجیٹلائزڈ کمیونٹی میں ہوٹل کی رہائش، اپارٹمنٹس، ریٹیل مراکز اور تفریحی زون شامل ہوں گے۔

نیوم نے کہا صحن میں ایک بل کھاتا بلیوارڈ سماجی جگہوں، مہمان نوازی، عمیق فنون، تقریبات، خریداری اور کھانے کے لوازمات کو ملاتا ہے۔

منصوبے میں اندرونی ٹرانزٹ سسٹم کا مقصد بالائی منازل تک آسان رسائی، رہائشیوں اور سیاحوں کو ان کے گھروں اور ہوٹلوں تک اور چھت پر قائم ساحلی نظاروں والے باغات تک پہنچانا ہے۔

نیوم نے کہا ایکولم ایک "مستقبل کے ماحولیاتی نظام کی نمائندگی کرتا ہے جو قدرتی ماحول میں ہم آہنگی کے ساتھ مربوط ہے۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں