اسرائیل رفح میں بےگناہ لوگوں کے قتل عام کا ذمہ دار ہے: سعودی عرب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب وزارت خارجہ نے اسرائیلی افواج کی طرف سے فلسطینی عوام کے خلاف نسل کشی کا سلسلہ جاری رکھنے کی مذمت کرتے ہوئے رفح میں نہتے فلسطینی پناہ گزینوں کے خیموں کو نشانہ بنانے پراسرائیلی حکام کو مکمل طور پر ذمہ دار ٹھہرایا ہے۔ وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ رفح اور تمام فلسطینی علاقوں میں جو کچھ ہو رہا ہے اس کا ذمہ دار اسرائیل ہے۔

وزارت خارجہ نے اس بات پر زور دیا کہ اسرائیلی افواج کی طرف سے تمام بین الاقوامی اور انسانی قراردادوں، قوانین اور اصولوں کی مسلسل خلاف ورزیاں جاری ہیں جب کہ اس پر عالمی برادری کی خاموشی افسوسناک ہے۔

سعودی عرب کی پریس ایجنسی ’ایس پی اے‘ کی رپورٹ کے مطابق مملکت نے بین الاقوامی برادری کی ضرورت پر زور دیا کہ وہ فلسطینیوں کی نسل کشی روکنے کے لیے زیادہ اپنی ذمہ داریاں سنبھالے، برادر فلسطینی عوام کے خلاف قتل عام کو روکے اور ذمہ داروں کا کڑا احتساب کرے۔

اسرائیلی فوج کی طرف سے محفوظ قرار دیے گئے رفح کے علاقے المواصی میں قائم السلام کیمپ میں بے گھر فلسطینیوں پر بمباری کی تھی جس کے نتیجے میں 45 معصوم بچے، خواتین اور بزرگ شہری شہید اور سیکڑوں زخمی ہوگئے تھے۔

رفح میں اس قتل عام پر عرب ممالک اور عالم اسلام کی طرف سے سخت مذمت کی گئی اور اس واقعے کی آزادانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں