تربت میں خفیہ اطلاع پر آپریشن، دو طرفہ فائرنگ کے بعد تین دہشت گرد ہلاک

قوم کے ساتھ مل کر بلوچستان کے امن واستحکام اور ترقی کو سبوتاژ کرنے کی کوششوں کو ناکام بنانے کے لیے سکیورٹی فورسز پرعزم ہیں: آئی ایس پی آر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

بلوچستان کے علاقے تربت میں سکیورٹی فورسز کے خفیہ اطلاع پر کیے گئے آپریش میں مقابلے کے دوران تین دہشت گرد مارے گئے۔

پاکستان فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ’’آئی ایس پی آر‘‘ کے مطابق سکیورٹی فورسز نے جمعرات کو تربت ہوشاب روڈ پر انٹیلی جنس کی بنیاد پر آپریشن کیا۔ ان علاقوں میں دیسی ساختہ بم نصب کرنے کے علاوہ سکیورٹی فورسز اور شہریوں پر فائرنگ کے واقعات سے منسلک دہشت گردوں کے ٹھکانے موجود تھے۔

جاری کردہ بیان میں بتایا گیا ہے کہ علاقے کی مسلسل انٹیلی جنس نگرانی اور جاسوسی کے نتیجے میں دہشت گردوں کے مقام کی نشاندہی کی گئی، فرار ہونے والے راستوں کو کاٹنے کے لیے ناکہ بندی کی گئی۔ آئی ایس پی آر کے مطابق آپریشن کے دوران دہشت گردوں نے سکیورٹی فورسز پر فائرنگ کردی۔

بعد ازاں شدید فائرنگ کے تبادلے کے بعد تین دہشت گردوں کی ہلاکت کی تصدیق کی گئی جس سے دیسی ساختہ بم سمیت اسلحہ، گولہ بارود کا ذخیرہ برآمد کیا گیا ہے۔

آئی ایس پی آر نے مزید کہا ہے کہ سکیورٹی فورسز قوم کے ساتھ مل کر بلوچستان کے امن و استحکام اور ترقی کو سبوتاژ کرنے کی کوششوں کو ناکام بنانے کے لیے پرعزم ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں