ارجنٹائن: میسی کی اہلیہ کے خاندان کو ڈاکوؤں نے لوٹ لیا، فائرنگ سے خاتون زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ارجنٹائن کے لیونل میسی کی اہلیہ انٹونیلا روکوزو کے اہل خانہ کو دارالحکومت بیونس آئرس سے 300 کلومیٹر دور ارجنٹائن کے شمال مشرق میں دور دراز کے شہر روزاریو میں مسلح ڈکیتی کا نشانہ بنایا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی میسی کی اہلیہ کی کزن آگسٹینا سکالیا کو گولی مار دی گئی۔ ڈکیتی اس وقت کی گئی جب روکوزو کی فیملی کو سپر مارکیٹ میں ایک ملازم کے ساتھ روکا گیا۔ خاندان اپنی ملکیتی سپر مارکیٹ کے قریب ایک بینک میں رقم جمع کرنے کے لیے گاڑی میں سوار تھا۔

اچانک ایک کار سکالیا کی کار کے قریب آئی اور اسے روکنے کی کوشش کی۔ وہ چوکنا ہوگئی اور ٹکر سے بچنے کے لیے بھاگنے کی کوشش کی لیکن وہ دوسری گزرنے والی کار سے ٹکرا گئی۔ پھر ڈاکوؤں میں سے ایک نے اس کی کالی گاڑی کی پچھلی کھڑکی کو گولی مار دی۔ کار کو زبردستی رکنے پر مجبور کیاگیا۔ دو افراد کار سے باہر نکلے اور کھڑکیوں کے شیشے توڑ دیےاور کار میں جو کچھ تھا وہ چوری کر کے لے گئے۔ اس سامان کی مالیت لگ بھگ 22 ہزار ڈالر کے برابر بنتی ہے۔

پولیس کے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ جو کچھ ہوا وہ اتفاق نہیں تھا بلکہ چوروں کو معلوم تھا کہ وہ کیا ڈھونڈ رہے ہیں۔ اسی وجہ سے اہل خانہ اور سپر مارکیٹ کے دیگر ملازمین سے بھی پوچھ گچھ کی گئی ہے۔ یہ پتہ لگایا جارہا ہے کہ رقم کی منتقلی کے متعلق کون جانتا تھا۔

پولیس نے یہ بھی بتایا کہ یہ دوسرا واقعہ ہے جس میں میسی کی اہلیہ کے اہل خانہ شامل ہیں۔ گزشتہ مارچ میں سٹور میں فائرنگ کی گئی تھی۔ اس واقعے میں سپر مارکیٹ کے سامنے 14 گولیاں چلائی گئیں۔ اس حوالے سے تفتیش شروع کردی گئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں