حج 1444

حجاج کرام کنکریاں جمع کرنے کے لیے پہاڑوں پرچڑھنے سے گریز کریں: سعودی وزارت حج

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عید الاضحیٰ کے پہلے دن بدھ کے روز فجر سے حجاج کرام نے منیٰ کی طرف رخت سفر باندھا جہاں انہوں نے منیٰ میں جمرہ عقبہ میں سنت ابراہیمی زندہ کرتے ہوئے ’شیطان‘ کو کنکریاں ماریں۔

دوسری طرف سعودی عرب کی وزارت حج و عمرہ نے حجاج کرام کو ہدایت کی تھی کہ وہ کنکریاں جمع کرنے کے لیے پہاڑوں پر چڑھنے سے اجتناب کریں۔

وزارت حج نےسماجی رابطوں کے پلیٹ فارم’ٹویٹر‘ کے اکاؤنٹ کے ذریعے کنکریاں اٹھانے کے لیے پہاڑوں پر چڑھنے اور کنکریاں پھینکتے وقت دوسروں کو نقصان پہنچانے سے بچنے کا مشورہ دیا۔

وزارت حج نے وضاحت کی کہ " ہر حاجی سات کنکریاں پھینکے۔ کنکریوں کے چھوٹے بڑے ہونے سے کوئی فرق نہیں پڑتاکیونکہ ایک سائز کی کنکریوں کا ملنا ضروری نہیں۔

وزارت حج نے حجاج کرام سے جمرات پر پتھراؤ کے دوران ہجوم اور بھگدڑ سے بچنے پر زور دیا۔ انہوں نے حجاج کرام سے کہا کہ وہ تفویج پروگرام کے مطابق باہر نکلیں اور پیدل چلنے والوں کی نقل و حرکت میں خلل ڈالنے سے گریز کریں۔

حجاج کرام نے آج بدھ کے روز مسجد حرام میں آمد کے بعد طواف افاضہ شروع کیا ہے۔ ’طواف افاضہ‘ کے موقعے پرصدارت عامہ برائے امور حرمین شریفین کی طرف سے عازمین کے لیے تمام سہولیات فراہم کی گئی ہیں اور عازمین کے لیے تمام احتیاطی تدابیر اختیار کی گئی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں