میراڈونا کا گرل فرینڈ کو بھری محفل میں بوسہ

ارجنٹائن کے فٹبالر کی 'دلیری' الجزائری میزبانوں کے لئے باعث خجالت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ارجنٹائن کے ایک لیجنڈ فٹبالر ڈیاگوارمانڈو میراڈونا کا الجزائرمیں ایک سرکاری تقریب کے دوران اپنی گرل فرینڈ کو دیا گیا بوسہ الجیرین عوامی حلقوں میں زیر سخت تنقید کا باعث بنا ہے۔عوام نے سوشل میڈیا پر مسٹر ماراڈونا کے اقدام کو "الجزائری" قوم کی توہین قرار دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق فٹبالر میراڈونا حال ہی میں الجزائرکے دورے پر آئے جہاں وہ اپنی گرل فرینڈ کے ہمراہ ایک سرکاری تقریب میں بھی دکھائی دیے۔ تقریب میں صدر بوتفلیقہ کی کابینہ کے اہم وزراء بھی موجود تھے۔

سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر میراڈونا کی فرینڈ کو بھری محفل میں دیے گئے مبینہ بوسے کی تصویر پر تند وتیز تبصرے جاری ہیں۔ عوامی اورسماجی حلقوں کی اکثریت نے ارجنٹینی کھلاڑی کے اس اقدام کو"ناپسندیدہ" قرار دیا ہے۔ عوام کو غصہ اس بات پرہے کہ ایک اعلیٰ سطحی حکومتی تقریب میں ماراڈونا نے ایسے کیوں کیا ہے؟ میراڈونا کے اس اقدام کو دیکھ کرپہلو میں بیٹھے الجزائری وزیر برائے کھیل وامور نوجوانان محمد تہمی نے شرمندگی کے باعث اپنا چہرہ دوسری طرف پھیر لیا، جبکہ خاتون وزیر مواصلات زھرہ دردوری بھی وہیں موجود تھیں، جو نمایان طورپر دکھائی نہیں دیتیں مگر وہ اس "متنازعہ بوس وکنار" کو دیکھ رہی ہیں۔

ناقدین کا کہنا ہے کہ ارجنٹائنی فٹبالرکی الجزائرکی سرکاری تقریب میں اعلیٰ اور معتبر حکومتی شخصیات کی موجودگی میں ایک ایسا اقدام کیا ہے جس نے پوری الجیرین قوم کی توہین کی ہے۔ اس سے یہ ظاہر ہو رہا ہے کہ میراڈونا کے نزدیک ہمارے ملک کی روایات اور آداب محفل کی کوئی اہمیت نہیں ہے۔

میراڈونا کے بوسے کے مسخرے پن کے بعد سماجی کارکنوں نے اس کی زندگی بعض دیگرگوشوں سے بھی نقاب اٹھائے ہیں۔ ناقدین کا کہنا ہے کہ مارا ڈونا احترام کے قابل شخص نہیں ہیں۔ وہ عورتوں ، نشے اور شراب وکباب کے رسیا ہیں۔ الجزائر میں انہوں نے ایک ناپسندیدہ حرکت کی ہے۔ کیا وہ کسی دوسرے عرب ملک میں بھی ایسا کرنے کی جرات کریں گے؟۔

الجیرین میڈیا کی رپورٹس کے مطابق ارجنٹائنی سابق فٹبالر میراڈونا ایک نیم سرکاری موبائل فون کمپنی"موبی لیس" کی تقریب میں شریک تھے۔ اس تقریب میں شرکت پر انہیں دس لاکھ یورو دیے گئے۔ تاہم بعض دوسرے ذرائع یہ رقم صرف تین لاکھ یورو بتاتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں