خطے میں جاری بحرانوں پرامریکا اور مصر کا موقف یکساں ہے: السیسی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مصری صدر عبدالفتاح السیسی نے بدھ کے روز امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ سے ٹیلی فون پر گفتگو کی ہے اور ان سے قطر سے جاری تنازع کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا ہے۔

مصری صدر کے دفتر نے اس ٹیلی فونک گفتگو کے بارے میں جاری کردہ ایک بیان میں کہا ہے کہ ’’ موجودہ علاقائی بحرانوں سے نمٹنے کے لیے دونوں صدور کے ویژن میں یکسانیت پائی جاتی ہے۔بالخصوص علاقائی سلامتی اور استحکام کے لیے خطرے کا موجب مسائل کے سیاسی حل کے لیے ان میں اتفاق پایا جاتا ہے‘‘۔

وائٹ ہاؤس نے اس بات چیت کے بارے میں جاری کردہ بیان میں کہا ہے کہ’’صدر ٹرمپ نے تمام ممالک کے لیے اپنے اس موقف کا اعادہ کیا ہے کہ دہشت گردوں کے لیے مالی معاونت کا سلسلہ بند ہونا چاہیے اور انتہا پسند نظریے کی بیخ کنی کی جانی چاہیے‘‘۔

صدر ٹرمپ نے مصری صدر سے فون کال میں شمال کوریا کے جوہری خطرے کے بارے میں بھی بات کی ہے اور تمام ممالک پر زوردیا ہے کہ وہ شمالی کوریا کے بارے میں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار دادوں پر مکمل عمل درآمد کریں۔شمالی کوریا کے شہریوں کو اپنے ہاں ورکر وں کے طور پر ٹھہرانے اور شمالی کوریا کو اقتصادی یا فوجی فوائد مہیا کرنے کا سلسلہ بند کردیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں