ایرانی صدر کے بھائی مالی بدعنوانیوں کے الزام میں گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ایرانی صدر حسن روحانی کے بھائی حسین فریدون کو مالیاتی جرائم کے الزامات میں گرفتار کر لیا گیا ہے۔

ایرانی عدلیہ کے نائب سربراہ غلام حسین محسنی اعجئی نے ایک نشری نیوز کانفرنس میں کہا ہے کہ ’’ اس شخص کے بارے میں مختلف تحقیقات کی گئی ہیں اور دوسرے افراد سے بھی تفتیش کی گئی ہے،ان میں سے بعض اس وقت جیل میں ہیں‘‘۔

انھوں نے کہا ہے کہ ’’ گذشتہ روز اس شخص کو ضمانت جاری کی گئی تھی لیکن وہ اس کو منظور کرانے میں ناکام رہا ہے اور اس کو جیل بھیج دیا گیا ہے‘‘۔اعجئی نے مزید کہا ہے کہ فریدون کی اگر ضمانت ہوجاتی ہے تو ان کو رہا کردیا جائے گا۔

فریدون کا تعلق سرکاری انشورنس کمپنی کے مینجروں کی تنخواہوں میں اضافے کے اسکینڈل میں ملوث حکام سے بتایا جاتا ہے۔یہ اسکینڈل ایک سال سے زیادہ عرصے تک صدر حسن روحانی کے لیے بھی دردسر بنا رہا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں