.

اردن نے شمالی کوریا کے ساتھ سفارتی تعلقات منقطع کر لیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اردن نے شمالی کوریا کے ساتھ اپنے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کا اعلان کیا ہے۔

اردن کے ایک سرکاری اہکار نے جمعرات کے روز فرانسیسی خبر رساں ایجنسی کو بتایا کہ شمالی کوریا کے ساتھ سفارتی تعلقات بنیادی طور پر مضبوط نوعیت کے نہیں اور ان کا منقطع کیا جانا اس حوالے سے اردن کے حلیفوں کی پالیسی کے مطابق عمل میں آیا ہے۔

وزارت عظمی کی ویب سائٹ کے مطابق شاہی دفتر نے کابینہ کی جانب سے تعلقات منقطع کیے جانے کے فیصلے کی منظوری دے دی ہے۔

اس سلسلے میں شمالی کوریا کے لیے اردنی سفیر جو عملی طور پر بیجنگ میں مقیم ہیں اور اردن کے لیے شمالی کوریا کے سفیر جو دمشق میں مقیم ہیں دونوں کی سندِ سفارت ختم کر دی گئی ہے۔

دو ماہ سے زیادہ عرصہ قبل شمالی کوریا کی جانب سے میزائل تجربات کرنے کے بعد امریکا نے تمام ممالک سے مطالبہ کیا تھا کہ وہ پیونگ یانگ کے ساتھ اپنے سفارتی اور تجارتی تعلقات منقطع کر لیں۔