القرضاوی کی 'فتاویٰ اپیلی کیشن' گوگل نے حذف کر دی گئی!

فتاویٰ میں نفرت پر اکسانے کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

معروف انٹرنیٹ سرچ انجن 'گوگل' نے اپنے'گوگل پلے' اسٹورسے مصری نژاد قطری عالم دین علامہ یوسف القرضاوی کےفتاویٰ پر مشتمل 'ایپلی کیشن' حذف کردی۔ شدت پسند مذہبی جماعت اخوان المسلمون کےدیرینہ مبلغ علامہ یوسف القرضاوی پرالزام ہے کہ وہ اپنے فتاویٰ کے ذریعے دنیامیں نفرت کو ہوا دے رہےہیں۔ دو سال قبل سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر نے اخوان المسلمون کو دہشت گرد قراردے رکھا ہے اور ان ممالک نے یوسف القرضاوی سمیت کئی دوسرے دہشت گردوں کو اشتہاری قراردےکران کے وارنٹ گرفتاری بھی جاری کیے ہیں۔

اخبار'سنڈے ٹائمز' کے مطابق یوسف القرضاوی کی 'فتاویٰ ایپ' میں دشمنی، نفرت اور دہشت گردی کی حمایت کی گئی ہے۔ اس لیے ان کی یہ ایپ جسے'یورو فتویٰ' کانام دیا گیا ہے کو حذف کردیا گیا ہے۔ یہ ایپلی کیشن گذشتہ ماہ آئرش دارالحکومت ڈبلن میں یورپی فتویٰ و ریسرچ کونسل کی طرف سے جاری کی گئی تھی جس میں نفرت پر اکسایا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں