.

مآرب میں یمن کی اسپیشل فورس کی نئی پاسنگ آؤٹ تقریب

فوج میں شامل ہونے والے کیڈٹس کو جدید جنگی مہارتوں سےآگاہ کیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی اسپیشل سیکیورٹی فورسز نے کل جمعرات کو شمال مشرقی مآرب گورنری میں غیرمعمولی مشقیں شروع کی ہیں۔ ان مشقوں میں حصہ لینے والے اہلکاروں کو لڑائی کے حوالے سے خصوصی ٹریننگ دینے کے ساتھ انہیں براہ راست فائرنگ، بھاری توپخانے کے استعمال اوردشمن کے فرضی علاقوں پر دھاوے بولنے کی تربیت فراہم کی جا رہی ہے۔

مسلح افواج کے میڈیا سیل کے مطابق خصوصی فورسز کے سربراہ بریگیڈیئر یحییٰ الیسری نے بتایا کہ مآرب میں پاسنگ آؤٹ کےدوران فوج میں جانے والے اہلکاروں کو ہرطرح کی جنگی مہارتوں سے آگاہ کیا جاتا ہے تاکہ وہ فوج میں خدمات انجام دیتے ہوئے مکمل پیشہ وارانہ انداز میں اپنی ذمہ داریاں انجام دے سکیں۔

مآرب میں عسکری تربیت کےٹریننک مینیجر کرنل عادل الغانمی نے باور کرایا کہ پاس آوٹ ہونے والی نئی کھیپ کو کھلے علاقوں میں جدید جنگی ضروریات اور تقاضوں سے ہم آہنگ تربیت فراہم کی جاتی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عسکری تربیت کے یہ ملک کی سیکیورٹی کی ضروریات کے حوالے سے اہمیت کی حامل ہے۔

خیال رہے کہ سعودی عرب کی قیادت میں قائم عرب اتحاد نے یمنی فوج کی تشکیل نو اور اس کی پیشہ وارانہ مہارت میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ عرب اتحادی فوج نے باغیوں سے چھڑائے گئےعلاقوں میں قیام امن ، یمنی فوج کی رٹ بحال کرنے، باغی ملیشیا کی سرکوبی اور یمن میں ایرانی پروگرام کو ناکام بنانے میں کلیدی کردار ادا کیا ہے۔