.

حزب اللہ کے تین وزراء سمیت سعد حریری کی نئی کابینہ میں 30 وزراء شامل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان کے صدر میشل عون نے جمعرات کے روز ایک صدارتی فرمان میں 30 رکنی کابینہ کی توثیق کی ہے۔ وزیراعظم سعد الحریری کی سربراہی میں قائم کی جانے والی نئی کابینہ میں ایران نواز حزب اللہ ملیشیا کے تین وزراء کو شامل کیا گیا ہے۔

العربیہ کےمطابق لبنان کی نئی کابینہ میں حزب اللہ کے تین وزراء جمیل جبق کو وزیرصحت، جبران باسیل کو وزیرخارجہ اور وریا حسن کو وزیر داخلہ مقرر کیا گیا۔

جمعرات کو وزیراعظم سعد حریری نے اپنی کابینہ کے ارکان کی فہرست صدر کو ارسال کی تھی۔ صدر کی طرف سے کابینہ کی توثیق کردی گئی ہے۔

لبنان میں قومی حکومت کی تشکیل کے لیے گذشتہ نو ماہ سے مسلسل کوششیں جاری تھیں اور مختلف دھڑوں میں وزارتوں کی تقسیم میں اتفاق رائے میں ناکامی کےباعث حکومت کی تشکیل مسلسل تاخیر کا شکار رہی۔

سعد حریری کی قیادت میں یہ مسلسل تیسری حکومت ہے۔ انہوں نے وسیع پیمانے پر مالی اصلاحات کا اعلان کیا ہے تاکہ ملک کی کمزور معیشت کو مضبوط بنانے کے کےلیے اربوں ڈالر کی سرمایہ کاری حاصل کی جاسکے۔

لبنان کی ایک سیاسی جماعت 'لبنان فورسز' کے صدر سمیر جعجع نے حکومت کی تشکیل سے قبل ایک ٹی وی بیان میں کہا کہ ان کی جماعت نئی حکومت کے ساتھ ہرممکن تعاون کرے گی۔ انہوں نے حکومت سازی کے عمل میں تعطل پیدا کرنے کے حوالے سے بعض قوتوں کے مطالبات کو نامعقول قرار دیا اور کہا کہ ان کی جماعت کو نئی حکموت میں انتظامی ترقی کی وزارت دی گئی ہے۔

وزیراعظم سعد حریری کی قیادت میں قائم ہونے والی نئی حکومت میں غسان حاصبانی کو نائب وزیراعظم، اکرم شہیب کو وزارت تعلیم، علی حسن خلیل کو خزانہ، محمد فنیش کو کھیل اور امور نوجوانان، جبران باسی کو خارجہ اور سمندر پارامور، وایل بو فاعور کو صنعت، ریا حفار حسن کو داخلہ اور بلدیات، سلیم جریصاتی کو صدارتی امور،الیاس بو صعب کو قومی دفاع، جمال جراح کو اطلاعات، ئوسف فینانوس کو محنت وٹرانسپورٹ، اوادیس کیدانیان کو سیاحت، البیر سرحان کو قانون وانصاف، محمود قماطی کو وزارت برائے پارلیمانی امور، منصور بطیش کو معیشت وتجارت، جمیل صبحی جبق کو وزارت صحت، کمیل ابو سلیمان کو لیبر، ریشا قیومجیان کو سماجی بہود، می شدیاق انتظامی ترقی، حسن اللقیس کو زراعت، محمد شقیر کو مواصلات، عادل افیونی کو وزارت مملکت برائے سائنس وٹیکنالوجی، فادی جریصاتی کو ماحولیات، غسان عطا اللہ کو امور مہاجرین، حسن مراد کو وزارت مملکت برائے تجارتی امور، صالح الغریب کو پناہ گزین امور، محمد دائود دائود کو ثقافت، فیولیت خیراللہ کو خواتین اور ندیٰ بستانی کو وزارت پانی پانی وبجلی کے قلم دان سونپے گئے ہیں۔