.

حکومتی رٹ کی بحالی کے بعد یمنی وزیراعظم کا شبوۃ کا دورہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی جنوب مشرقی گورنری میں انقلاب کونسل کے انخلاء اور حکومتی رٹ کی بحالی کے بعد آئینی حکومت کے وزیراعظم معین عبدالملک نے گذشتہ روز علاقے کا دورہ کیا۔

یمنی حکومت کے ایک ذمہ دار ذریعے نے 'العربیہ ڈاٹ نیٹ' کو بتایا کہ وزیراعظم وزراء کے ایک وفد کے ہمراہ اتوار کو شبوۃ گورنری کے دارالحکومت عتق پہنچے۔

خیال رہے کہ دو ہفتے قبل جنوبی یمن کی علاحدگی پسند انقلابی کونسل کے مسلح گروپ نے شبوۃ گورنری میں سرکاری تنصیبات پرقبضہ کرلیاتھا۔ تاہم سعودی عرب اور دوسرے ممالک کی مداخلت سےانقلابی کونسل نے فوجی اور دیگر سرکاری تنصیبات خالی کردیں۔

شبوۃ گونری میں آئینی حکومت اور انقلابی کونسل کے درمیان چند روز تک جاری رہنے والی لڑاکے بعد علاقے پرحکومتی فوج نے مکمل کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔

ذرائع کے مطابق یمنی وزیراعظم شبوۃ نے مقامی قیادت سے ملاقات کی اور علاقے میں امن وامان کی صورت حال اور دیگر مسائل پرتبادلہ خیال کیا۔

قبل ازیں ہفتے کو یمن کی مسلح افواج کے سربراہ جنرل عبداللہ النخعی نے شبوۃ میں تعینات عسکری قیادت سے ٹیلیفون پربات چیت کی تھی۔ شبوۃ میں سیکیورٹی کے انچارج بریگیڈیئر عزیز العتیقی اور آرمی چیف کےدرمیان ہونے والی بات چیت میں گورنری میں سیکیورٹی کی صورت حال کا جائزہ لیا گیا۔