اسرائیلی فوج کی فائرنگ، تین فلسطینی شہید

واقعہ جنین میں صبح سویرے پیش آیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی قابض فوج نے فائنگ کے تین فلسطینی شہریوں کو شہید کر دیا ہے۔ مغربی کنارے کے شہر جنین میں قابض فوج کی یہ وحشیانہ کارروائی جمعرات کی صبح سامنے آئی ہے۔ وزارت صحت کے مطابق فوج نے طلوع آفتاب کے ساتھ ہی حملہ کر دیا جس کے نتیجے میں تین افراد جاں بحق ہو گئے۔

تاہم ابھی اسرائیلی فوج یا اس کے کسی ترجمان نے اس واقعے کے بارے میں کوئی بیان جاری نہیں کیا ہے۔ واضح رہے پچھلے کچھ عرصے سے اسرائیلی فوج نے مغربی کنارے کو اپنی کارروائیوں کا بطور خاص نشانہ بنا رکھا ہے۔

جنین شہر اسی مقبوضہ مغربی کنارے کا شہر ہے جہاں حالیہ عرصے میں چالیس فلسطینی اسرائیلی فوج کے ہاتھوں شہید ہو چکے ہیں۔

جبکہ پورے مغربی کنارے میں مجموعی طور پر ایک سو چالیس سے زائد فلسطینی شہید ہو چکے ہیں اور 26 اسرائیلی مارے گئے ہیں۔ ان فلسطینیوں میں ایک بارہ سالہ بچہ اور امریکی خاتون صحافی ابو عاقلہ بھی شامل ہیں، ابو عالہ کو ماہ مئی میں اسرائیلی فوج کی ایک کارروائی کی کوریج کے دوران جنین میں ہی گولی ماری گئی تھی۔
ادھر اسلامی جہاد گروپ کی طرف سے کہا گیا ہے کہ اس کے مزاحمت کاروں نے جمعرات کی صبح جنین میں اسرائیلی فوج کا ایک جھڑپ کے دوران زبردست مقابلہ کیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں