60 سالہ والد بیٹے کو ڈرائیونگ سکھاتے ہوئے کار تلے کچلا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے علاقے نجران میں بارہ سالہ بیٹے نے گاڑی چلانے کی تربیت کے دوران والد کو کچل دیا۔ ہلال الاحمر کی امدادی ٹیم نے فوری طبی امداد فراہم کی مگر وہ جانبر نہ ہو سکا۔

تفصیلات کے مطابق نجران ریجن کی ہلال الاحمر کے ترجمان نے بتایا کہ’ کنٹرول روم میں اطلاع ملی کہ کہ شاہ فہد تفریح گاہ میں ایک شخص گاڑی کی ٹکر سے شدید زخمی ہے‘۔

اطلاع ملنے پر ہلال الاحمر کی امدادی ٹیم فوری طور پر جائے حادثہ پر پہنچ گئی۔ زخمی شخص کو گاڑی کے نیچے سے نکالا، اس کی حالت انتہائی خطرناک تھی۔

ہلال الاحمر کے ترجمان کا کہنا تھا کہ ’متاثرہ شخص کی دل کی دھڑکن بند ہو چکی تھی جبکہ سانس بھی نہیں آ رہی تھی اسے فوری طبی امداد فراہم کرتے ہوئے مصنوعی تنفس دینے کی کوشش کی بعد ازاں اسے ہسپتال منتقل کیا گیا مگر وہ چل بسا۔

ذرائع کا کہنا تھا کہ’ نجران کے جنوب میں واقع شاہ فہد تفریح گاہ کے کچے میدان میں ایک شخص اپنے 12 سالہ بیٹے کو گاڑی چلانا سیکھا رہا تھا‘۔

بتایا گیا کہ ’بیٹے کو ابتدائی تربیت دینے کے بعد وہ خود گاڑی سے اتر گیا اور دور کھڑے ہو کر بیٹے کو گاڑی چلاتا دیکھنے لگا‘۔ گاڑی بیٹے کے قابو سے باہر ہو گئی اور انتہائی تیز رفتاری سے سامنے کھڑے والد پر چڑھ گئی جس سے شدید زخم آئے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں