غزہ: الجزیرہ ٹی وی کا کیمرہ مین ابو دقہ کوریج کے دوران ڈرون حملے سے ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

غزہ میں اسرائیلی جنگ کے دوران ایک اور صحافی کو نشانہ بنا کر ہلاک کر دیا گیا ہے۔ یہ صحافی بین الاقوامی ٹی وی چینل الجزیرہ کے ساتھ بطور کیمرہ مین وابستہ تھے۔ وہ اسرائیلی حملےمیں تباہ کیے گئے ایک سکول کی کوریج کے لیے جمعہ کے روز خان یونس گئے تھے اور سکول کی تباہی کی کوریج کر رہے تھے۔ اس دوران انہیں بھی ڈرون سے نشانہ بنا کر ہلاک کر دیا گیا۔

الزیرہ کے مطابق اس تباہ شدہ سکول تک امدادی کارکنوں کے کسی بھی طرح پہنچنے کے راستے بند تھے۔ لہٰذا کیمرہ مین ابو دقہ کو بچانے کے لیے کوئی امددای کوشش ممکن نہ ہو سکی۔ تاہم بعد ازاں ابو دقہ کی لاش کو وہاں سے نکال لیا گیا ہے۔

الجزیرہ کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ اس کے کیمرہ مین ابو دقہ کو ڈرون کے ذریعے داغے گئے میزائل سے نشانہ بنایا گیا ہے۔ یہ واقعہ جنوبی غزہ کے علاقے خان یونس میں پیش آیا ہے۔ اب تک غزہ میں اسرائیلی بمباری سے درجنوں صحافی کوریج کے دوران اور اپنے گھروں میں ہلاک ہو چکے ہیں۔

واضح رہے ڈرون حملے سے ہلاکت کا یہ غزہ میں غالباً ہلاکت کا پہلا واقعہ رپورٹ کیا گیا ہے۔ عام طور پر ڈرون حملے ٹارگیٹڈ کارروائیوں میں استعمال کیے جاتے ہیں۔ وائٹ ہاوس کی طرف سے ایک روز قبل ہی اعلان کیا گیا ہے کہ حماس رہنماؤں کو اب ٹارگیٹڈ حملوں کا نشانہ بنایا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں