ہماری اولین ترجیح غزہ میں جنگ بندی ہے: صدر السیسی کا کانگریس کے وفد سے خطاب

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

آج بدھ کے روزمصری صدرعبدالفتاح السیسی نے امریکی کانگریس کے ایک وفد کو خطے میں تنازعات کے دائرہ کار کو بڑھانے والے عوامل سے بچنے کے لیے کوششیں تیز کرنے پر زور دیا ہے۔انہوں نے خطے میں جنگ ،علاقائی اور بین الاقوامی امن کے لیے "خطرناک نتائج" سے خبردار کیا۔

مصری ایوان صدر کے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر السیسی نے امریکی وفد کو اس بات پر زور دیا کہ "خطے میں پائیدار سلامتی اور استحکام کے حصول کا واحد راستہ انصاف پر مبنی حل ہے، جس سے خطے کے تمام لوگوں کے لیے حقیقی سلامتی حاصل ہو اور اس سطح پر بحرانوں اور جنگوں کو ختم کرتا ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ السیسی نے "مسئلہ فلسطین کے منصفانہ اور جامع حل پر سنجیدگی سے کام کرنے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ انہوں نے منظور شدہ شرائط کے مطابق ایک آزاد فلسطینی ریاست کے قیام کے ذریعےخطے میں دیر پا امن کی اہمیت پربھی بات کی اور غزہ جنگ میں شہریوں کی حفاظت یقینی بنانے پر زور دیا‘‘۔

صدر مصر کی طرف سے فلسطینیوں کو ان کی سرزمین سے بے گھر کر کے فلسطینی کاز کو ختم کرنے کی کوششوں کو مکمل طور پر مسترد کردیا۔

ادھر مصری وزارت خارجہ کے ترجمان احمد ابو زید نے بدھ کے روز کہا کہ حالیہ ہفتوں کی پیش رفت سے خطے میں تنازعات کے پھیلنے کے خطرے کو ظاہر ہوتا ہے۔

ابو زید نے قاہرہ میں وزیر خارجہ سامح شکری اور امریکی سینیٹ اور ایوان نمائندگان کے ارکان کے درمیان ملاقات کے بعد ایک بیان میں مزید کہا کہ عالمی تجارتی نقل و حرکت کے بہاؤ اور حفاظت کے لیے بحیرہ احمر میں نیوی گیشن کی حفاظت ضروری ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں