پاکستان نے چھ بھارتی 'اسمگلروں' کو گرفتار، ہندوستانی سرحدی فورس کے ملوث ہونے کا امکان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستان کی فوج نے منگل کے روز بتایا یے کہ رینجرز نے 29 جولائی سے تین اگست کے درمیان اپنی مشرقی سرحد سے چھ ہندوستانی شہریوں کو گرفتار کیا ہے۔

فوج نے مزید کہا کہ منشیات اور ہتھیاروں کے ان اسمگلروں کی سرحد پار نقل وحرکت نے ایسے واقعات میں دوسری طرف کی سیکورٹی فورسز کے ملوث ہونے پر سوالات اٹھتے ہیں۔

پاکستان کی بھارت کے ساتھ 3,300 کلومیٹر طویل بین الاقوامی سرحد ملتی ہے جس پر نئی دہلی میں حکام نے باڑ لگا دی ہے اور دونوں طرف سخت حفاظت اور نگرانی کی جاتی ہے۔

پاکستانی فوج نے ایک دن قبل کشمیر کے متنازعہ ہمالیائی علاقے میں ہندوستانی فوجیوں پر فائرنگ کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ اس سے ایک دیہاتی ہلاک ہو گیا جو کھیت میں کام کر رہا تھا۔

دونوں ممالک ماضی میں ایک دوسرے پر بلا اشتعال فائرنگ اور سرحد پار سے غیر قانونی نقل و حرکت کی حوصلہ افزائی کا الزام بھی عائد کرتے رہے ہیں حالانکہ وہ خود پر ایسے الزامات سے اختلاف کرتے ہیں۔

فوج کے میڈیا ونگ آئی ایس پی آر نے ایک بیان میں کہا، "ہندوستان کے ساتھ بین الاقوامی سرحد پر تعینات پاکستانی رینجرز کے دستوں نے 29 جولائی سے تین اگست 2023 تک چھ بار ہندوستانی شہریوں کو پاکستانی حدود میں گرفتار کیا ہے۔"

بیان میں مزید کہا گیا کہ "یہ سمگلر/مجرم پاکستان میں منشیات، اسلحہ اور گولہ بارود سمگل کرنے کی کوشش کر رہے تھے۔ یہ حیرت کی بات ہے کہ یہ اسمگلر ہندوستانی [بارڈر سیکورٹی فورس] کی مسلسل نگرانی میں بھاری باڑ والی سرحد کو پار کرنے میں کامیاب ہوئے ہیں۔ اس سے منشیات اور ہتھیاروں کی اسمگلنگ میں بی ایس ایف کے فوجیوں کی ممکنہ شمولیت ظاہر ہوتی ہے۔ اس کے علاوہ یہ بات بھی حیران کن ہے کہ ہندوستانی بی ایس ایف کے دستے اب تک چھ شہریوں کی گمشدگی کی اطلاع دینے میں ناکام رہے ہیں۔"

فوج نے مشتبہ ہندوستانی اسمگلروں کی تصاویر بھی میڈیا کو جاری کیں اور مزید کہا کہ غیر قانونی طور پر ملک میں داخلے اور مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث ہونے پر ان کے خلاف ملکی قانون کے مطابق کارروائی کی جائے گی۔

بیان میں مزید کہا گیا۔ "پاکستان کی سیکورٹی فورسز مسلسل چوکس رہیں گی اور توقع ہے کہ ہندوستانی بی ایس ایف پیشہ ورانہ طور پر کام کرے گی اور اپنی سرزمین سے چلنے والے سمگلنگ میں ملوث گروہوں سے اپنے تعلقات منقطع کرے گی۔"

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں