.

حاکم دبئی نے کامیاب حکمرانی کے دس زریں اصول بتا دیئے، جانئے!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے نائب صدر اور دبئی کے حکمران شیخ محمد بن راشد آل مکتوم نے اپنی نئی کتاب "قصتي" (میری کہانی) سے چند اقتباسات ٹویٹر پر پوسٹ کیے ہیں۔ ان کی پوسٹ میں کامیاب حکومت کے لیے دس تجاویز بھی پیش کی گئی ہیں۔ یہ تجاویز درج ذیل ہیں :

1 – لوگوں کی خدمت کریں

حکومت کا کام لوگوں اور معاشرے کی خدمت ہے۔ یاد رکھیے اقدامات، نظام اور قوانین یہ سب انسانوں کی خدمت کے واسطے ہیں۔ اقدامات اور قوانین کو مقدّس نہ بنائیں اور نہ یہ سمجھیے کہ نظام ،،، انسانوں سے زیادہ اہم ہے۔

2 – کرسی کو نہ پُوجیں

ملازمت، منصب اور ذمے داری یہ سب عارضی چیزیں ہیں۔ اگر آپ نے کرسی سے محبت کی تو آپ سے اپنی اقدار اور بنیادی اصولوں پر مقدّم رکھیں گے جب کہ آپ جس مقصد کے لیے آئے ہیں وہ لوگوں کی خدمت ہے۔ اگر آپ نے کرسی سے محبت کی تو پھر آپ کے اندر ایسے فیصلے کرنے کی ہمت اور شجاعت نہیں ہو گی جو آپ کو اوپر لے جائیں اور اگلی کرسی تک پہنچا دیں۔

3 – اپنا منصوبہ وضع کریں

جب آپ منصوبہ بندی نہیں کر رہے ہوتے تو گویا آپ اپنی ناکامی کی منصوبہ بندی میں مصروف ہوتے ہیں۔ قائد کا بنیادی کردار سمت کا تعین کرنا، اپنی ٹیم کی اس جانب رہ نمائی کرنا اور منزل تک پہنچنے کے لیے اپنی ٹیم کو مسلسل متحرک رکھنا ہے۔ اگر آپ پلان وضع کرنے میں ناکام رہے تو پھر بنا کسی ہدایت اور رہ نمائی کے چلتے رہیں گے اور کبھی کسی قیمتی چیز تک نہیں پہنچ سکیں گے۔

4 – خود پر کڑی نگرانی رکھیں

اپنے ادارے میں کارکردگی پر کڑی نظر رکھیں۔ ادارے میں خود پر اندرونی اور بیرونی نگراں مقرر کریں جو غیر جانب دار ہو۔ منصوبے کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے واسطے درست سمت میں آگے بڑھیں۔ کمزور اشاریے اور کمزور نگرانی رکھ کر خود کو اور اپنے وطن کو دھوکہ مت دیں۔

5 – کام کے لیے اپنی ٹیم تیار کریں

اکیلے اڑان نہ بھریں اور اکیلے تالی نہ بجائیں۔ ایک ٹیم بنائیے جو آپ کے اہداف کو نئی بلندیوں تک لے کر جائے۔ ٹیم کے لوگوں کے لیے اپنے اختیارات سے دست بردار ہوں۔ ان کے اندر چھپ عظیم صلاحیتوں کو باہر لائیے اور ان کی کامیابیوں کو نمایاں کیجے۔ اس لیے کہ عظیم ٹیم ہی آپ کو عظیم مقامات تک پہنچائے گی۔

6 – جدّت پیدا کریں یا پھر دست بردار ہو جائیں

جو حکومتیں جدت نہیں پیدا کرتیں وہ بوسیدہ ہو جاتی ہیں۔ افکار اور خیالات خون کو گرماتے ہیں۔ ان سے مسابقت پیدا ہوتی ہے اور لاگت بھی کم ہوتی ہے۔ نئی معیشت افکار پر ہی قائم ہے۔ ایک عظیم خیال سے زیادہ طاقت ور کوئی چیز نہیں۔

7 – رابطہ رکھیں اور پُر امید رہیں

دنیا کو اپنی خواہشات اور صلاحیتوں سے آگاہ کریں۔ میڈیا کے ذریعے اپنے لیے عوام کی معاونت حاصل کریں کیوں کہ وہ جانتے ہیں کہ آپ کہاں جا رہے ہیں۔ میڈیا میں اپنے اہداف کا اعلان کریں کیوں کہ وہ آپ کا احتساب کریں گے اور یہ آپ کے حق میں ہے۔ اس طرح آپ اپنے اعلان کردہ اہداف کو یقینی بنانے کے لیے انتہائی محنت کریں گے۔ ہمیشہ رابطے میں رہیے اور کبھی خود کو نہ چھپائیے۔ میڈیا دوست ہے دشمن نہیں۔ مخلوص اور کامیاب لوگوں کا دوست اور کاہل اور بدعنوانوں کا دشمن .

8 – مسابقت کا ماحول پید اکریں

بحیثیت انسان مسابقت ہمارے لیے ایک اہم بنیادی اصول ہے خواہ آپ اپنے مسابق بنیں یا کسی دوسرے کے۔ کام کے ماحول کو مسابقت کا ماحول بنائیے۔ مسابقت حکومتوں میں زندگی کا اسلوب ہے۔ اس کے بغیر جوش اور جذبہ ٹھنڈا پڑ جاتا ہے اور عزائم ماند ہو جاتے ہیں۔

9 – قیادت کو جنم دیں

ایسی قیادت کو جنم دیں جو مستقبل کو تیار کرے۔ حقیقی قائد وہ ہے جو قیادت تیار کرے۔ حقیقی ادارہ وہ ہے جو قیادت کو جنم دے۔ قیادت کو جنم دینا ایک راز ہے جس کو صرف وہ لوگ سمجھ سکتے ہیں جنہوں اپنی انا اور ذات پر قابو پا لیا ہو۔ وہ اس بات کو سمجھ چکے ہوتے ہیں کہ عظیم ترین کامیابی انسانوں کا تیار کرنا ہے نہ کہ پتھروں کا ...

10 – زندگی بنانے کے سفر کا آغاز کریں

ہم خوش قسمت ہیں کہ حکومت میں کام کر رہے ہیں۔ ہماری ملازمت زندگی کی خوب صورت ترین چیز ہے بلکہ درحقیقت یہ زندگی ہے۔ اس کے ذریعے ہم کروڑوں لوگوں کی زندگی بہتر بناتے ہیں۔

کبھی بھی اپنے کردار، کام یا کوشش کو کم تر نہ سمجھیے۔ آپ تو زندگی تیار کرنے کے میدان میں، مستقبل کی خاکہ بندی اور دیس کی تعمیر میں مصروف عمل ہیں۔