.

قطر کو ہمسایہ ملکوں کے خدشات دور کرنا ہوں گے:امارات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے ایک بار پھر خلیجی ملک قطر پر زور دیا ہے کہ وہ پڑوسی عرب ملکوں میں عدم استحکام پیدا کرنے اور دہشت گردی کی پشت پناہی سے باز آئے اور پڑوسی ملکوں کے خدشات دور کرے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق اپنے دورہ بھارت کے دوران بھارتی صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ خلیجی ملکوں میں جاری موجودہ بحران سےنکلنے کا بہترین راستہ یہی ہے کہ قطر پڑوسی ملکوں میں مداخلت اور عدم استحکام پھیلانے کی سازشوں سے باز آئے اور ہمسایہ ممالک کے خدشات دور کرے۔

خیال رہے کہ اماراتی وزیرمملکت برائے خارجہ امور ڈاکٹر انور قرقاش دو روزہ دورہ بھارت کے بعد گذشتہ روز وطن واپس لوٹ آئے تھے۔ امارات روانگی سے قبل نئی دہلی میں صحافیوں اور اخبار نویسوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ’قطر کا الجزیرہ ٹی وی چینل اخوان المسلمون کا ترجمان چینل بن چکا ہے۔ اس کے علاوہ چینل خطے کی سلامتی کے لیے بھی خطرہ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ عرب ممالک نے قطر کے اس عربی ٹی وی چینل کی نشریات بند کی ہیں۔

ایک سوال کے جواب میں انور قرقاش نے کہا کہ خلیجی ملکوں میں جاری بحران کا خلیجی ملکوں میں مقیم بھارتی تارکین وطن پر کسی قسم کا منفی اثر پڑے گا اور نہ ہی بھارت کے ساتھ عرب ممالک کے اقتصادی اور تجارتی تعلقات متاثرہوں گے۔

ایک سوال کے جواب میں اماراتی وزیر کاکہنا تھا کہ قطر کا بائیکاٹ کرنے والے چاروں عرب ممالک بڑے اور باصول ممالک ہیں۔ وہ کسی چھوٹےملک پر تسلط جمانے کا کوئی ارادہ نہیں رکھتے۔

قطر ایک چھوٹا ملک مگر وسائل سے مالا مال ہے مگر یہ اپنے مالی اور مادی وسائل کو دہشت گردی کی معاونت کے لیے استعمال کررہا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ بعض لوگ قطر اور دوسرے ملکوں کے درمیان جاری کشیدگی کو پانچ ملکوں کے مابین لڑائی قرار دیتے ہیں۔