سعودی عرب میں 31000 سے زائد پاکستانی عازمینِ حج کے لیے خصوصی فلائٹ آپریشن جاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

پاکستان کی وزارتِ مذہبی امور نے جمعرات کو اعلان کیا کہ نو مئی کو خصوصی فلائٹ آپریشن کے آغاز کے بعد سے سرکاری سکیم سے مستفید ہونے والے 31,057 عازمینِ حج سعودی عرب پہنچ چکے ہیں اور مزید 2,450 عازمین بارہ پروازوں کے ذریعے دن کے آخر میں مدینہ منورہ پہنچیں گے۔

ملک نے عازمین کو مقدس شہر مدینہ منورہ پہنچانے کے لیے اب تک 126 حج پروازیں چلائی ہیں تاکہ وہ مناسکِ حج ادا کرنے کے لیے مکہ منتقل ہونے سے پہلے مملکت میں ابتدائی چند دن گذار لیں۔ البتہ ملک جدہ کے لیے براہِ راست حج پروازیں کل سے شروع کرے گا جو مکہ سے تقریباً ایک گھنٹے کی مسافت پر ہے۔

12,000 سے زائد پاکستانی عازمین جنہوں نے مدینہ میں اپنا قیام مکمل کر لیا ہے، پہلے ہی مکہ روانہ ہو چکے ہیں۔ وزارت نے اعلان کیا ہے کہ عزیزیہ اور بطحہ قریش کے محلوں میں ان کی آمد سے رونق ہونے لگی ہے۔

وزارت نے ایک بیان میں کہا، "126 حج پروازوں کے ذریعے 31,057 سرکاری سکیم کے تحت جانے والے عازمین سعودی عرب پہنچ چکے ہیں۔ آج مزید 2450 عازمین 12 پروازوں کے ذریعے مدینہ منورہ پہنچیں گے۔ پرائیویٹ سکیم کے تحت 2000 سے زائد عازمین بھی مملکت پہنچ چکے ہیں۔"

بیان میں یہ بھی بتایا گیا کہ وزارت نے حجاج کو طبی سہولیات فراہم کرنے کے لیے 156 افراد کو ذمہ داری دے رکھی ہے جبکہ 336 افراد آمد و رفت، رہائش اور کھانے کے انتظامات کے ذمہ دار تھے۔

اس میں مزید کہا گیا ہے کہ مکہ مکرمہ میں مرکزی کنٹرول آفس کے اہلکار بھی پاکستان حج موبائل ایپ کے ذریعے حجاج کو رہنمائی اور مدد فراہم کر رہے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں