.

پوتین شام میں لڑائی ختم کرانے کے لیے اپنا اثرو رسوخ استعمال کریں: فرانس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

فرانسیسی صدر امانویل میکرون نے اپنے روسی ہم منصب ولادی میر پوتین پر زور دیا ہے کہ وہ شام میں لڑائی ختم کرانے، فریقین کو مذاکرات کی میز پر لانے اور سیاسی انتقال اقتدار کے لیے اپنا اثرو نفوذ استعمال کریں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق فرانسیسی صدر نے ان خیالات کا اظہار الیزیہ شاہی محل میں پیوتن کے ہمراہ ایک مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب میں کیا۔ فرانسیسی صدر نے شام میں عام شہریوں کی جان ومال کے تحفظ کو یقینی بنانے اور فوجی کارروائیوں کی روک تھام کے لیے ماسکو سے موثر کردار ادا کرنے کا مطالبہ کیا۔

خبر رساں ادارے’رائٹرز‘ کے مطابق فرانسیسی اور روسی صدور نے ملاقات کے دوران خطے میں داعش کے خلاف جاری لڑائی میں حصہ لینے کی ضرورت پر زور دیا۔

فرانسیسی ایوان صدر کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر میکرون کو توقع ہے کہ شام کے تنازع کے منصفانہ حل کے لیے دونوں ممالک منظم بات چیت کی راہ ہموار کرنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔

فرانسیسی صدر کا کہنا تھا کہ اگر شامی حکومت پر شہریوں کے خلاف کیمیائی ہتھیاروں کے استعمال کا دعویٰ ثابت ہو جاتا ہے تو امریکا اور فرانس کیمیائی حملے میں ملوث عناصر کو سزا دینے میں کوئی ڈھیل نہیں کریں گے۔

حال ہی میں فرانسیسی آرمی چیف جنلر فرنسو لوکوانٹرا نے کہا تھا کہ اگر شام میں کیمیائی حملوں کا ثبوت ملتا ہے تو ان کا ملک امریکا کے ساتھ مل کر دمشق کے خلاف کارروائی سے گریز نہیں کرے گا۔