یمن کی معیشت کی درستی اولین ترجیح ہے: اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی مارٹن گریفتھ کا کہنا ہے کہ یمنی عوام کو درپیش قحط سالی کے خطرے کا مقابلہ کرنے کے سلسلے میں یمن کی معیشت کی درستی اولین ترجیح ہے۔

العربیہ نیوز چینل کے پروگرام "الشارع الدبلوماسی" میں دیے گئے بیان میں گریفتھ نے سعودی عرب کی جانب سے کی جانے والی کوششوں اور یمنی معیشت کی سپورٹ کے واسطے مملکت اور امارات کی طرف سے مالی امداد کو سراہا۔ انہوں نے واضح کیا کہ کرنسی کی قدر میں کمی یمن میں قحط سالی کی ایک وجہ ہے۔

اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی نے انکشاف کیا کہ یمنی حکومت اور باغی حوثی ملیشیا کے درمیان بات چیت عنقریب جنیوا یا ویانا میں منعقد ہو گی۔ گریفتھ نے بتایا کہ وہ 16 نومبر کو سلامتی کونسل کو آئندہ یمنی بات چیت کی تاریخ سے آگاہ کریں گے۔

اقوام متحدہ کے ایلچی نے بتایا کہ سکریٹری جنرل آنتونیو گوتیریس یمن کا تنازع حل کروانے کی شدید خواہش رکھتے ہیں۔

گریفتھ کے مطابق وہ جلد ہی نئے یمنی وزیراعظم سے عدن میں ملاقات کریں گے اور تعز صوبے کی صورت حال جاننے کے لیے وہاں کا رخ کریں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں