بڑھتی ہوئی کشیدگی ۔۔ اسرائیل کا مسجد اقصی پر حملہ، غزہ پر بمباری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیلی پولیس کے مسجد اقصیٰ میں نمازیوں اور معکفین پر حملوں اور غزہ کی پٹی سے راکٹ باری کے بعد فلسطینی علاقوں میں غیر معمولی کشیدگی دیکھی جا رہی ہے۔

بدھ کی صبح اسرائیلی لڑاکا طیاروں سے غزہ کے کثیف آبادی والے علاقوں پر بمباری کی۔

رائیٹرز نے مزاحمتی تنظیم حماس کے زیر چلنے والے ریڈیو کے حوالے سے بتایا ہے کہ اسرائیلی فضائی حملوں سے غزہ شہر میں تنظیم کے فوجی تربیتی مرکز کو نقصان پہنچا۔

الاقصی کمپاؤنڈ پر حملہ

یہ کارروائی اسرائیلی فوج کے اس اعلان کے بعد کی گئی جس میں بتایا گیا تھا کہ غزہ سے اسرائیل پر نو راکٹ داغے گئے ہیں جس کے بعد سرحدی علاقوں کی بعض میونسپلیٹز میں خطرے کے سائرن بجائے گئے۔

عین اسی وقت اسرائیلی پولیس نے مسجد اقصی میں نماز فجر کے وقت نمازیوں پر ھلہ بول دیا، تل ابیب حکام نے اپنی اس کارروائی کو بلوے کا ردعمل قرار دیا ہے۔

بیت المقدس : مسجد اقصی میں اسرائیلی فوج
بیت المقدس : مسجد اقصی میں اسرائیلی فوج

پولیس نے دعویٰ کیا کہ انہوں نے یہ کارروائی مجبور ہو کر کی کیونکہ مسجد کے اندر ’’ماسک سے چہرے ڈھانپے فسادیوں‘‘ نے خود کو گرفتار کرنے پر مزاحمت شروع کی۔ ان کے پاس، بہ قول اسرائیلی پولیس، پتھر، ڈنڈے اور آتشین سامان موجود تھا۔

عرب ملکوں کی مذمت

مسجد اقصیٰ پر اسرائیلی پولیس کے حملوں کے بعد مقبوضہ غرب اردن کے علاقوں میں احتجاج کا سلسلہ شروع ہو گیا ہے جبکہ عرب دنیا بشمول، سعودی عرب، مصر اور اردن نے ان اسرائیلی حملوں کی شدید مذمت کی۔

سعودی عرب نے مسجد اقصیٰ کے احاطے میں اسرائیل کے ’صریحاً دھاوے‘ کی مذمت کرتے ہوئے اسے بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزی قرار دیتے ہوئے مسترد کیا ہے۔

ادھر عمان میں اردن کی وزارت خارجہ نے بھی ’’اسرائیلی پولیس کے مسجد پر دھاوے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے مطالبہ کیا ہے کہ اسرائیلی مسجد سے اپنی پولیس فوری نکالے۔‘‘

مصری وزارت خارجہ نے ’’اس کھلی اسرائیلی جارحیت کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس بزدلانہ کارروائی سے مسجد کے اندر خواتین، معتکفین اور نمازیوں سمیت متعدد افراد زخمی ہوئے ہیں۔‘‘

مقبوضہ مغربی کنارے اور مقبوضہ بیت المقدس میں گذشتہ ایک سال کے دوران تشدد میں اضافہ دیکھا گیا ہے اور اس بات کا خدشہ ہے کہ رواں ماہ کشیدگی مزید بڑھ سکتی ہے کیوں کہ مسلمانوں کے مقدس مہینے رمضان کے ساتھ یہودیوں کا تہوار فسح اور عیسائیوں کا تہوار ایسٹر بھی قریب ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں